خیبرپختونخوا، مالی سال 2015-16کیلئے487ارب88کروڑچالیس لاکھ روپے کاٹیکس فری بجٹ پیش ..
تازہ ترین : 1

خیبرپختونخوا، مالی سال 2015-16کیلئے487ارب88کروڑچالیس لاکھ روپے کاٹیکس فری بجٹ پیش کردیاگیا

تعلیم کیلئے 97ارب54کروڑ22لاکھ،، صحت کیلئے 29ارب95 کروڑ34لاکھ40ہزارروپے ،،سماجی بہبود کیلئے ایک ارب37کروڑ21لاکھ روپے مختص اجلاس کے دوران اپوزیشن کاشدیداحتجاج،بجٹ تقریر کے دوران حکومت کیخلاف نعرے بازی، اجلاس سے واک آؤٹ

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 15 جون۔2015ء)خیبرپختونخوااسمبلی میں مالی سال 2015-16کیلئے487ارب88کروڑچالیس لاکھ روپے کاٹیکس فری بجٹ پیش کردیاگیاجورواں مالی سال کی نسبت تقریباً21فیصدزیادہ ہے ۔ صوبائی وزیر خزانہ مظفرسید نے پیر کے روز خیبرپختونخوااسمبلی میں آئندہ مالی سال کا بجٹ پیش کرتے ہوئے اسے متوازن بجٹ قرار دیا۔بجٹ تقریر کے دوران اپوزیشن اراکین نے حکومت کیخلاف احتجاج کیا اوربجٹ تقریر کے دوران شورشرابہ جاری رکھا اپوزیشن اراکین شیم شیم کے نعرے بھی لگاتے رہے۔

صوبائی وزیر خزانہ نے بجٹ کی تفصیلات پیش کرتے ہوئے بتایاکہ تعلیم کیلئے 97ارب54کروڑ22لاکھ22لاکھ13ہزارروپے رکھے گئے ہیں جو رواں مالی سال کی نسبت 21فیصدزیادہ ہے صحت کیلئے 29ارب95 کروڑ34لاکھ40ہزارروپے رکھے گئے ہیں جوکہ رواں سال کی نسبت تقریباً19فیصدزیادہ ہے سماجی بہبود ،خصوصی تعلیم وترقی خواتین کیلئے ایک ارب37کروڑ21لاکھ19ہزاررکھے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت23فیصد زیادہ ہے پولیس کیلئے32ارب74کروڑ52لاکھ چوالیس ہزار روپے رکھے گئے۔

جورواں مالی سال کی نسبت15فیصد زیادہ ہے آبپاشی کیلئے تین ارب ساٹھ کروڑ91لاکھ95ہزارروپے مختص کئے گئے ہیں جوک رواں مالی سال کی نسبت13فیصد زیادہ ہے فنی تعلیم اورافرادی تربیت کیلئے ایک ارب75کروڑ48لاکھ 80ہزار روپے مختص کئے گئے ہیں جو کہ رواں مالی سال کی نسبت12فیصد زیادہ ہے زراعت کیلئے تین ارب51کروڑ98لاکھ69ہزارروپے مختص کئے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت12فیصد زیادہ ہے ماحولیات وجنگلات کیلئے ایک ارب83کروڑ78لاکھ33ہزارروپے مختص کئے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت11فیصد زیادہ ہے مواصلات وتعمیرات کیلئے دوارب76کروڑ36لاکھ43ہزارمختص کئے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت17فیصدزیادہ ہے پنشن کیلئے36ارب99کروڑتیس لاکھ پچیس ہزار روپے مختص کئے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت بیس فیصدزیادہ ہے گندم پرسبسڈی کیلےء دوارب90کروڑروپے مختص کئے گئے یہں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت سات فیصدزیادہ ہے اور قرضوں پر مارک اپ کی ادائیگی کیلئے سات ارب دو کروڑدس لاکھ 90ہزار روپے رکھے گئے ہیں جوکہ رواں مالی سال کی نسبت1.3فیصد کم ہے۔

وقت اشاعت : 15/06/2015 - 17:50:55

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں