جوڈیشل کمیشن کو تحقیقاتی کمیشن میں بدلنے کا مطالبہ عمران خان کی شکست کا اعتراف ..
تازہ ترین : 1
جوڈیشل کمیشن کو تحقیقاتی کمیشن میں بدلنے کا مطالبہ عمران خان کی شکست ..

جوڈیشل کمیشن کو تحقیقاتی کمیشن میں بدلنے کا مطالبہ عمران خان کی شکست کا اعتراف ہے، آر اوز کو بلانا یوٹرن کے بادشاہ کا ایک نیا یوٹرن ہے،جوڈیشل کمیشن کی باقاعدہ کارروائی کے دوران تحریک انصاف نے آر اوز کو بطور گواہ نہیں بلایا، نیا مطالبہ ملکی سیاست کو الجھائے رکھنے کی کوشش ہے ، وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر پرویز رشید کا تحریک انصاف کے جوڈیشل کمیشن کو لکھے گئے خط پر رد عمل کااظہار ۔ تفصیلی خبر

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔14 جون۔2015ء) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر پرویز رشید نے کہا ہے کہ جوڈیشل کمیشن کو تحقیقاتی کمیشن میں بدلنے کا مطالبہ عمران خان کی شکست کا اعتراف ہے،عمران خان اپنے جھوٹ کو تسلیم کر کے الزامات پر معافی مانگیں ،آر اوز کو بلانا یوٹرن کے بادشاہ کا ایک نیا یوٹرن ہے،جوڈیشل کمیشن کی باقاعدہ کارروائی کے دوران تحریک انصاف نے آر اوز کو بطور گواہ نہیں بلایا، نیا مطالبہ ملکی سیاست کو الجھائے رکھنے کی کوشش ہے تا کہ ترقی کے اہداف حاصل نہ کئے جا سکیں۔

اتوار کو تحریک انصاف کی جانب سے جوڈیشل کمیشن کو لکھے گئے خط پر اپنے رد عمل میں انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی جانب سے جوڈیشل کمیشن کو لکھا گیا خط اور مطالبہ در اصل عمران خان کی شکست کا اعتراف ہے، ثبوت، دستاویزات اور گواہیاں پیش کرنے کے دعوے میں ناکام ہونے کے بعد پی ٹی آئی نے جوڈیشل کمیشن کو نئے خطوط لکھنا شروع کر دیئے ہیں، جوڈیشل کمیشن کی باقاعدہ کارروائی کے دوران پی ٹی آئی نے آر اوز کو بطور گواہ نہیں بلایا، نئے مطالبے میں آر اوز کو بلانا یوٹرن کے بادشاہ کا نیا یوٹرن ہے، انکوائری کمیشن کے حتمی نتیجے تک پہنچنے کے مطالبہ پر پی ٹی آئی کا مطالبہ پاکستان کی سیاست کو الجھانے میں ڈالنے کیلئے ہے تا کہ قومی ترقی کے اہداف حاصل نہ کئے جا سکیں۔

عمران خان پہلے دن سے اپنے الزامات کی صداقت تسلیم کرنے میں ناکام رہے، وہ جوڈیشل کمیشن کے سوالوں کے جواب نہ دے سکے، وہ نہیں بتا سکے کہ انتخابات میں دھاندلی کا سرغنہ کون تھا؟ کیا منصوبہ تھا؟ اور کس نے اس پر عملدرآمد کرایا؟ ڈی چوک کی رونقیں پہلے دن سے ہی ختم ہونا شروع ہو گئی تھیں، ڈی چوک کا پیغام محض ٹی وی سکرین تک ہی محدود تھا، ڈی چوک سیاست کیلئے عوامی حمایت کی مسلسل کمی نے عمران خان کو بوکھلا دیا تھا، عمران خان اپنے جھوٹ کو تسلیم کریں، الزامات پر معافی مانگ کر یہ الزامات واپس لیں اور دہشت گردی کے خاتمے، ملکی ترقی و خوشحالی کے ایجنڈے کی تکمیل کی راہ میں رکاوٹ نہ بنیں۔

وقت اشاعت : 14/06/2015 - 19:19:19

اپنی رائے کا اظہار کریں