لاہور،پنجاب کے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں صوبے کے پسماندہ علاقوں میں 4دانش سکولوں ..
تازہ ترین : 1

لاہور،پنجاب کے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں صوبے کے پسماندہ علاقوں میں 4دانش سکولوں کے قیام کا اعلان

4ہزار 727سکولوں کی بلڈنگز کی دوبارہ ، 24ہزار 500اضافی کمروں کی تعمیر اور 500نئے سکول بھی کھولے جائیں گے

لاہور( اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 12 جون۔2015ء) پنجاب کے آئندہ مالی سال کے بجٹ میں صوبے کے پسماندہ علاقوں میں 4دانش سکولوں کے قیام کا بھی اعلان کیا گیا۔وزیر خزانہ ڈاکٹر عائشہ غوث پاشا نے بجٹ تقریر میں کہا کہ ہماری حکومت نے معاشی طور پر پسماندہ مگر ذہین طلباء کو معیاری تعلیم مہیا کرنے کے لئے چودہ دانش سکول قائم کیے ہیں جبکہ اگلے مالی سال میں صوبے کے پسماندہ علاقوں میں چار نئے دانش سکول قائم کیے جائیں گے ۔

ترقیاتی بجٹ سے 990ہائی سکولز میں کمپیوٹر لیب کی تنصیب ، 7ہزار 500سکولوں میں مسنگ فسیلیٹیزکی فراہمی ،4ہزار 727سکولوں کی بلڈنگز کی دوبارہ تعمیر ، سکولوں میں 24ہزار 500اضافی کمروں کی تعمیر اور 500نئے سکول کھولے جائیں گے ۔اگلے مالی سال میں ہائر ایجوکیشن کے شعبے میں نئے کالجز اور یونیورسٹیوں کے قیام کے علاوہ موجودہ کالجوں میں اضافی سہولتیں یعنی کلاس روم اور لیبارٹریز مہیا کی جائیں گی ۔ آئندہ مالی سال میں وہاڑی میں بہاوالدین ذکریا یونیورسٹی کے سب کیمپس کا قیام عمل میں لایا جائے گا ۔ جبکہ جھنگ اور ساہیوال میں نئی یونیورسٹیاں قائم کی جائیں گی ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/06/2015 - 22:39:21

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں