سندھ میں سب سے زیادہ 45فیصد فارم پندرہ غائب ٗ خیبر پختونخوا میں 43فیصد فارم پندرہ ..
تازہ ترین : 1
سندھ میں سب سے زیادہ 45فیصد فارم پندرہ غائب ٗ خیبر پختونخوا میں 43فیصد ..

سندھ میں سب سے زیادہ 45فیصد فارم پندرہ غائب ٗ خیبر پختونخوا میں 43فیصد فارم پندرہ موجود نہیں ٗ انکوائری کمیشن میں انکشاف

تحریک انصاف کے 44 فیصد اراکین قومی اسمبلی کے حلقہ انتخاب میں فارم پندرہ موجود نہیں ٗ رپورٹ

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 12 جون۔2015ء)انتخابی دھاندلی انکوائری کمیشن میں انکشاف ہوا ہے کہ سندھ میں سب سے زیادہ 45فیصد فارم پندرہ غائب ٗ خیبر پختونخوا میں 43فیصد فارم پندرہ موجود نہیں ، تحریک انصاف کے 44 فیصد اراکین قومی اسمبلی کے حلقہ انتخاب میں فارم پندرہ موجود نہیں۔گزشتہ روز انتخابی دھاندلی انکوائری کمیشن میں انتخابی تھیلوں سے فارم 15 سے متعلق 85 فیصد حلقوں کی رپورٹ پیش کی گئی ٗ فارم 15 کی غیر موجودگی کے معاملے میں سندھ باقی تمام صوبوں پر بازی لے گیا جہاں انتخابی تھیلوں سے فارم 15 کے گم ہونے کی شرح 45 فیصد رہی ٗ سندھ کے بعد سب سے زیادہ فارم 15 خیبر پختونخوا میں غائب ہوئے ٗخیبر پختونخوا میں 43 فیصد انتخابی تھیلوں سے فارم 15 برآمد نہیں ہوئے ٗ بلوچستان میں فارم 15 غائب ہونے کی شرح 40 فیصد رہی ٗ پنجاب میں 71 فیصد انتخابی تھیلوں میں فارم 15 موجود ہیں ٗ 29 فیصد فارم 15 غائب ہیں ٗ85 فیصد حلقوں کی رپورٹ کے مطابق مجموعی طور پر قومی اسمبلی کے 33 فیصد فارم 15 موجود نہیں ٗتحریک انصاف کے اراکین قومی اسمبلی کے حلقوں میں 44 فیصد فارم 15 نہیں ملے ٗ پیپلزپارٹی کے اراکین قومی اسمبلی کے حلقوں میں 40 فیصد فارم 15 غائب ہیں ٗ مسلم لیگ ن کے کامیاب امیدواروں کے حلقوں میں فارم 15 گم ہونے کی شرح 28فیصد رہی۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/06/2015 - 18:33:06

قارئین کی رائے :

  • راجہ عمران مانی کی رائے : 13/06/2015 - 09:45:09

    کل میں نے میڈیا میں سنا کے عمران خان صاحب کہہ رہے تھے کہ خیبر پختنخوا میں جو ریلی نکالی گئ اس میں اپنے لوگ بھیج دیتا تا کہ انکی عزت رہ جاتی تو خان صاحب بڑی ریلی نکالنے سے اور توڑ پھوڑ کرنے سے آپ کا دل ابھی بھی نییں بھرا؟؟ وہ بھلے چند لوگ تھے مگر کسی چیز کو نقصان نہیں پہنچایا۔

    اس رائے کا جواب دیں

اپنی رائے کا اظہار کریں