چین کے سابق سیکورٹی چیف کو کرپشن کے کیسز میں عمر قید کی سزا
تازہ ترین : 1

چین کے سابق سیکورٹی چیف کو کرپشن کے کیسز میں عمر قید کی سزا

بیجنگ ۔ 11 جون (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 12 جون۔2015ء) چین کے سابق سیکورٹی چیف ژوینگ کنگ کو بدعنوانی اور اختیارات کے غلط استعمال کرنے پر عمر قید کی سزا سنا دی گئی ۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق ان کے خلاف دھائیوں سے مقدمہ چل رہا تھا۔ انہوں نے شمالی شہر تیان جن میں ایک بند کمرہ سماعت کے دوران اپنے اوپر لگائے گئے بدعنوانی ، اختیارات کے ناجائز استعمال اور ریاستی راز افشاں کرنے کے الزامات کا اعتراف کیا ۔

عدالت نے کہاکہ انہوں نے اور مختلف غیر قانونی کاروباری سرگرمیوں میں 338 ملین ڈالرمنافع کی مد میں وصول کئے۔ ان پر 30 ملین یوآن رشوت لینے کے الزامات بھی ثابت ہوئے ہیں۔ عدالت نے کہاکہ انہوں نے 5 خفیہ دستاویزات بھی جاری کیں۔ عدالت نے ان پر لگائے جانے والے الزامات ثابت ہونے پر انہیں عمر قید کی سزا سنائی ہے اور ان کے اثاثوں کو بھی ضبط کرنے کا حکم دیا ہے۔ واضح رہے کہ چینی صدر شی جن پینگ نے 2012ء میں اقتدار میں آنے کے بعد کرپشن کے خلاف مہم شروع کر رکھی ہے جس کے باعث سابق اعلیٰ حکومتی اہلکاروں سے تفتیش جاری ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/06/2015 - 17:36:29

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں