ہزارہ یونیورسٹی میں جھڑپ‘ دستی بموں کا آزادانہ استعمال‘8 طلباء زخمی
تازہ ترین : 1

ہزارہ یونیورسٹی میں جھڑپ‘ دستی بموں کا آزادانہ استعمال‘8 طلباء زخمی

مانسہرہ(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 11 جون۔2015ء) ہزارہ یونیورسٹی میں طلبہ گروہوں میں جھڑپ، گولیوں اور دستی بموں کا آزادانہ استعمال ہوا جس کے نتیجے میں 8 طلبہ زخمی ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق ہزارہ یونیورسٹی کی 2 طلبہ تنظیموں کے درمیان تصادم ہوا جس نے شدت اختیارکرلی۔تصادم کے دوران طلبہ کی جانب سے فائرنگ کی گئی اور دونوں جانب سے دستی بموں کا بھی استعمال کیا گیا جس کے نتیجے میں طلبہ شدید زخمی ہوگئے ہیں۔

زخمی طلبہ کو سول اسپتال منتقل کیا گیا جہاں انہیں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔پولیس نے واقعے کے فوراً بعد ہزارہ یونی ورسٹی کو گھیرے میں لے لیا ہے اور واقعے میں ملوث عناصر سے متعلق تفتیش شروع کردی ہے۔ دوسری جانب پولیس ذرائع نے ہزارہ یونیورسٹی میں دستی بموں کے استعمال کی خبر کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ طلبہ گولیاں لگنے کے سبب زخمی ہوئے ہیں۔

وقت اشاعت : 11/06/2015 - 15:13:21

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں