ادا کار و ہدایت کار سنتوش کمار کی برسی عقیدت واحترام سے منائی گئی
تازہ ترین : 1
ادا کار و ہدایت کار سنتوش کمار کی برسی عقیدت واحترام سے منائی گئی

ادا کار و ہدایت کار سنتوش کمار کی برسی عقیدت واحترام سے منائی گئی

فیصل آباد ۔11 جون (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 11 جون۔2015ء) پاکستانی فلم انڈسٹری کے نامور ادا کار و معروف ہدایت کار سنتوش کمار جو 11جون 1982ء کو 56برس کی عمر میں اپنے لاکھوں مداحوں کو داغ مفارکت دے گئے تھے کی 33ویں برسی جمعرات کو انتہائی عقیدت و احترام کے ساتھ منائی گئی۔خوبصورتی ، ذہانت اور فن کی بے مثال صلاحیت سے لیس ادا کار سنتوش کمار جن کا اصل نام موسیٰ رضا تھا 25دسمبر 1925ء کو لاہور میں پیدا ہوئے ۔

انہوں نے نور جہاں ، راگنی، سورن لتا، مسرت نذیر ، نیلو ، نیر سلطانہ ،شمیم آراء ، حسنہ ، بہار، دیبہ ، رانی کے ہمراہ درجنوں فلموں میں یاد گار مرکزی کردار ادا کئے۔صبیحہ خانم ، درپن ، نیر سلطانہ ، ایس سلمان ، پنااور منصور وغیرہ کا تعلق بھی سنتوش کمار کے خاندان سے تھا جنہوں نے ادا کاری ، ہدائت کاری ، فلم سازی کے شعبہ میں اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا۔

بیلی، شام ڈھلے ، دو آنسو ، دیور بھابھی،آواز ، قاتل جیسی درجنوں فلموں میں یاد گار کردار ادا کرنے والے سنتوش کمار کو 1950ء سے لے کر 1982ء تک کے 32سالوں کے دوران فلم انڈسٹری پر راج کرنے کا بھی اعزاز حاصل رہا۔انہوں نے اپنی پہلی فلم بیلی میں اپنے مد مقابل کام کرنے والی ہیروئن صبیحہ خانم سے شادی بھی کی۔ان کی برسی کے موقع پر ان کے مداحوں نے بھی مختلف تقریبات کا انعقادکیا جبکہ الیکٹرانک میڈیا نے ان کی فنی زندگی پر پروگرامات نشرکئے۔

وقت اشاعت : 11/06/2015 - 14:24:27

اپنی رائے کا اظہار کریں