حماس نے پچھلے برس ستمبر میں ایتھوپیائی نسل کے صہیونی فوجی کو یرغمال بنایا، اسرائیل ..
تازہ ترین : 1

حماس نے پچھلے برس ستمبر میں ایتھوپیائی نسل کے صہیونی فوجی کو یرغمال بنایا، اسرائیل کا الزام

مقبوضہ بیت المقدس (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 11 جون۔2015ء)اسرائیلی ملٹری پراسیکیوٹر نے کہاہے کہ گزشتہ برس ستمبر میں حماس کے مزاحمت کاروں نے ایک ایتھوپیائی نسل کے یہودی فوجی کو یرغمال بنا یا تھا ۔ ایک رپورٹ میں کہا گیا کہ فلسطینی مزاحمت کاروں کی جانب سے ابراہام منغسٹو نامی ایتھوپیائی نسل کے یہودی فوجی کو غزہ کی پٹی میں داخلے کے دوران یرغمال بنایاگیا، مغوی کی عمر 24 سال ہے اور وہ حماس کے ہاں پچھلے 10ماہ سے جنگی قیدی کے طورپر رہ رہا ہے۔

رپورٹ میں کہا گیاہے کہ ابراہام نامی یہودی فوجی کا آبائی تعلق عسقلان شہر سے ہے اور اسے پچھلے سال غزہ کے قریب ساحل سے یرغمال بنایا گیا۔اسرائیلی میڈیا کے مطابق اسرائیلی حکام کی جانب سے مغوی کے اہل خانہ کو ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ابراہام کی گمشدگی یا اغواء کے بارے میں کسی سے کوئی بات نہ کریں۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 11/06/2015 - 14:09:39

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں