کراچی کے علاقے منگھوپیر میں رینجرز کے سرچ آپریشن کے دوران 20 ملزمان گرفتار، اسلحہ ..
تازہ ترین : 1

کراچی کے علاقے منگھوپیر میں رینجرز کے سرچ آپریشن کے دوران 20 ملزمان گرفتار، اسلحہ برآمد،کنواری کالونی کے تمام داخلی اور خارجی راستے بند کردیئے گئے تھے،کسی بھی غیر متعلقہ شخص کو علاقے میں داخل ہونے کی اجازت نہیں تھی

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔19 جنوری ۔2014ء) رینجرز نے منگھوپیر کے علاقے کنواری کالونی میں کئی گھنٹوں پر محیط سرچ آپریشن کے دوران اسلحہ برآمد کرتے ہوئے 20 ملزمان کو حراست میں لے لیا ہے۔رینجرزذرائع کے مطابق اتوارکی علی الصبح کنواری کالونی میں مبینہ طور پر موجود کالعدم تنظیموں سے وابستہ دہشت گردوں کی گرفتاری کے لئے سرچ آپریشن کیا گیا، آپریشن میں رینجرز کے ایک ہزار اہلکاروں نے حصہ لیا جن میں خواتین اہلکار بھی شامل تھیں جبکہ کارروائی میں انسداد دہشت گردی کا دستہ بھی شامل ہوا جبکہ آپریشن کی فضائی نگرانی بھی کی گئی۔

آپریشن کے دوران کنواری کالونی کے تمام داخلی اور خارجی راستے بند کردیئے گئے تھے اور کسی بھی غیر متعلقہ شخص کو علاقے میں داخل ہونے کی اجازت نہیں تھی ، منگھوپیر جانے والی ٹریفک کو نصرت بھٹو کالونی سے قلندریہ چوک کی جانب جبکہ سرحد پیٹرول پمپ سے ٹریفک کو کٹی پہاڑی کی جانب موڑ دیا گیا تھا۔رینجرزترجمان کے مطابق کارروائی کالعدم تنظیم سے وابستہ دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پرکی گئی۔

آپریشن کی فضائی نگرانی بھی ہیلی کاپٹرکے زریعے کی گئی۔آپریشن کے دوران علاقے میں صبح کھلنے والی دکانیں بھی بند رہیں۔آپریشن کے خاتمے پر سندھ رینجرز کے ترجمان بریگیڈیئرحامد نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ شہر میں پچھلے کئی سال سے جرائم پیشہ افراد کے خلاف کوئی مناسب کارروائی نہیں کی گئی تاہم پچھلے 5ماہ سے جرائم پیشہ افراد کے خلاف منظم انداز میں کارروائی کی جارہی ہے، انھوں نے کہا کہ کنواری کالونی میں آپریشن کے دوران 20 ملزمان کو گرفتار کیا گیا جن میں کالعدم تنظیموں سے تعلق رکھنے والے افراد بھی شامل ہیں، گرفتار ملزمان کے قبضے سے 30 سے زائد ہتھیار بھی برآمد ہوئے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ کراچی کا محرم بڑا حساس ہوتا تھا اور جو واقعہ اورنگی میں ہوا اس پر پولیس اور رینجرز کی انٹیلی جنس کام کررہی ہے۔

وقت اشاعت : 19/01/2014 - 20:49:49

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں