وزیراعظم نواز شریف نے صحافتی تنظیموں کے تحفظ کے اقدامات کرنے کیلئے 2 رکنی کمیٹی ..
تازہ ترین : 1
وزیراعظم نواز شریف نے صحافتی تنظیموں کے تحفظ کے اقدامات کرنے کیلئے ..

وزیراعظم نواز شریف نے صحافتی تنظیموں کے تحفظ کے اقدامات کرنے کیلئے 2 رکنی کمیٹی تشکیل دیدی

لاہور(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 18جنوری 2014ء)وفاقی وزیراطلاعات پرویز رشید نے نجی ٹی وی کی وین پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشتگردی کسی ایک فرد کا نہیں پورے ملک کا مسئلہ ہے ،سب کو ملکر خاتمے تک اپنا کردار ادا کرنا ہوگا ،بدقسمتی سے پاکستان میں مسجدیں، عبادت گاہیں، بازار اور معصوم عوام محفوظ نہیں ،عمران خان اور منور حسن طالبان کے ساتھ مذاکرات کے عمل کو آگے بڑھانے کے لئے حکومت سے تعاون کریں ۔

ہفتہ کو نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراطلاعات پرویز رشید نے کہاکہ (نجی ٹی وی ) ایکسپریس میڈیا گروپ پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں، ان کے غم میں برابر کے شریک ہیں، شہید ہونے والے کارکن پر امن لوگ تھے۔ انہوں نے کہاکہ وزیراعظم نواز شریف نے صحافتی تنظیموں کے تحفظ کے اقدامات کرنے کے لئے 2 رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے جس میں وزیرداخلہ چوہدری نثار احمد اور وہ خود شامل ہیں، کمیٹی صحافتی تنظیموں اور میڈیا گروپ مالکان سے مل کر ان کے تحفظ کیلئے پیش کی جانے والی تجاویز پرعمل درآمد کو یقینی بنانے کو کوشش کرے گی۔

پرویز رشید نے کہاکہ دہشت گردی کسی ایک فرد کا نہیں پورے ملک کا مسئلہ ہے جو ہمیں ورثے میں ملا ہے، ہم سب کو مل کر اس کے خاتمے تک اپنا کردار ادا کرنا ہوگا، دہشتگردوں کے بہت سے گروہ ہیں، حکومت ان سے رابطہ نہیں کر سکتی تاہم وہ جب چاہیں حکومت سے رابطہ کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کی اولین ترجیح ہے کہ پوری قوم کو ساتھ لے کر چلا جائے، دہشت گردی کے تدارک کے لئے بات چیت کی پالیسی بھی مرتب بھی گئی۔

وزیراطلاعات نے کہاکہ دہشتگردوں سے درخواست ہے کہ مسجدوں، عبادت گاہوں، بازاروں اور معصوم عوام پر حملے نہ کریں۔وزیراطلاعات نے کہاکہ پاکستان تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان اور جماعت اسلامی کے امیر سید منور حسن سے اپیل ہے کہ طالبان کے ساتھ مذاکرات کے عمل کو آگے بڑھانے کے لئے حکومت سے تعاون کریں۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان اور منور حسن جن لوگوں نے ایکسپریس نیوز پر حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے ان سے پوچھیں کہ آخر ان معصوم لوگوں کا گناہ کیا تھا۔

وقت اشاعت : 18/01/2014 - 15:23:00

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں