حماس نے جان کیری کے مشرق وسطیٰ میں دیر پا قیام امن سے متعلق فارمولے کو ایک بار پھر ..
تازہ ترین : 1

حماس نے جان کیری کے مشرق وسطیٰ میں دیر پا قیام امن سے متعلق فارمولے کو ایک بار پھر مسترد کردیا

مقبوضہ بیت المقدس (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 15جنوری 2014ء) حماس نے جان کیری کے مشرق وسطیٰ میں دیر پا قیام امن سے متعلق تجاویز پرمبنی فارمولے کو ایک بار پھر مسترد کرتے ہوئے کہاہے کہ امریکی وزیرخارجہ کی سکیم میں مظلوم فلسطینی عوام کے ادنی حقوق کا بھی کوئی تذکرہ نہیں، اگر یہ سکیم فلسطینیوں پر مسلط کرنے کی کوشش کی گئی تو اس کے سنگین نتائج سامنے آئینگے اور کوئی فلسطینی بھی اسے قبول نہیں کریگا۔

مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق دوحہ میں حماس کے سیاسی شعبے کے رکن سامی خاطر نے ایک انٹرویو میں کہا کہ ان کی جماعت جان کیری کے امن فارمولے کا باریک بینی سے جائزہ لے رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیل کی بالادستی کو تسلیم کرنے کے کسی بھی امن فارمولے کو فلسطینی عوام قبول نہیں کریں گے۔ ان کے مطابق حماس عالمی برادری کے سامنے یہ واضح کر چکی ہے کہ فلسطینی عوام امریکا اور اسرائیل کی منشا کے تحت کسی بھی حل کو قبول نہیں کریں گے کیونکہ امریکیوں اور اسرائیلیوں کا وضع کردہ کوئی بھی فارمولا کسی صورت میں فلسطینیوں کے بنیادی حقوق کا ضامن نہیں ہوسکتا ہے۔

امریکی اور صہیونی ملکراسرائیل کو ایک یہودی ریاست تسلیم کرانے کیلئے فلسطینیوں پر دباؤ ڈال رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امریکی امن فارمولے میں بیت المقدس اسرائیل کو دینے کی بات کی جا رہی ہے۔ فلسطینی پناہ گزینوں کی واپسی روکنے کی سازش کی جا رہی ہے اور جس فلسطینی ریاست کا تذکرہ کیا جا رہا ہے اس کے چاروں اطراف میں اسرائیل کا فوجی حصار قائم کرنے کی باتیں کی جارہی ہیں۔ فلسطینی عوام ایسے کسی بھی امن فارمولے کو قبول نہیں کرسکتے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 15/01/2014 - 15:32:23

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں