تحریک انصاف کے ڈرون حملوں کیخلاف جاری دھرنے کو 41روز مکمل،جمعرات کو ضلع چارسدہ ..
تازہ ترین : 1

تحریک انصاف کے ڈرون حملوں کیخلاف جاری دھرنے کو 41روز مکمل،جمعرات کو ضلع چارسدہ کے کارکنان نے دھرنا کیمپ میں ڈیوٹی دی،وفاقی حکومت کی اجازت اورتعاون کے بغیر ڈرون حملے ممکن نہیں،حکمران عوام کو دھوکہ نہ دیں،رہنماؤں کا خطاب

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔2 جنوری ۔2014ء)تحریک انصاف کے زیر اہتمام ڈرون حملوں کیخلاف جاری دھرنے کو41روزمکمل ہو گئے۔جمعرات کو دھرنے کے41ویں روزپشاور ریجن اور ضلع چارسدہ کے کارکنان نے دھرنا کیمپ میں ڈیوٹی دی۔ اس موقع پر ایم پی اے عارف احمد زئی،ریجنل جنرل سیکرٹری فضل خان،ضلعی صدر و جنرل سیکرٹری اورریجنل انفارمیشن سیکرٹری ولی خان آفریدی،میجر فیاض خلیل و دیگررہنما اور اتحادی جماعتوں کے کارکنان بھی موجود تھے۔

شرکاء نے ڈرون حملوں کیخلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے رہنماؤں نے وفاقی حکومت اور امریکہ سی آئی اے پر شدید تنقید کی۔انھوں نے کہا کہ پاکستانی حکومت کی اجازت اور تعاون کے بغیر ڈرون حملے ممکن نہیں۔حکمران عوام کے سامنے ڈرون حملوں کی مخالفت کرتے ہیں اور در پردہ امریکہ کو ڈرون حملوں میں تعاون فراہم کر رہے ہیں۔ڈرون حملوں سے دہشتگردی ختم نہیں ہو گی بلکہ مزید بڑھے گی،ڈرون حملوں میں ہزاروں بیگناہ شہری،بچے اور خواتین مارے گئے۔

انھوں نے کہا کہ وفاقی حکومت ڈرون حملے روکنے کیلئے امریکہ کے سامنے دو ٹوک موقف اپنائے اور اگر اس کے بعد بھی ڈرون آئے تو اسے مارگرایا جائے۔مقررین نے ڈرون حملوں کیخلاف کامیاب دھرنے پر پارٹی کارکنان اور اتحادیوں کو مبارکباد دیتے ہوئے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ دھرنے کی وجہ سے گزشتہ 41روز سے طورخم سرحد سے نیٹو سپلائی مکمل طور پر بند ہے اور ان دنوں میں نیٹو سپلائی کی ایک بھی گاڑی نہیں گزر سکی۔ رہنماؤں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ڈرون حملوں کیخلاف دھرنا حملے بند ہونے تک جاری رہیگا۔

وقت اشاعت : 02/01/2014 - 21:20:35

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں