سانحہ چارسدہ کی شدید مذمت کرتا ہوں،واقعہ پر گہرا افسوس ہے، نیشنل ایکشن پلان پر ..
تازہ ترین : 1

سانحہ چارسدہ کی شدید مذمت کرتا ہوں،واقعہ پر گہرا افسوس ہے، نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد سے مطمئن ہوں ،سکیورٹی حکا م اور سول انتظامیہ ایک پیج پر ہیں،افغانستان میں امن قائم ہونے تک پاکستان میں امن مشکل ہے، جب کوئی مر نے کے لئے آتا ہے تو آپ سب کو پتہ ہے اسے روکنا مشکل ہوتا ہے، یونیورسٹی کے اپنے 50,60گارڈز ہیں

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک کی نجی ٹی وی سے گفتگو

ایڈن برگ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔20 جنوری۔2016ء) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے کہا ہے کہ سانحہ چارسدہ کی شدید مذمت کرتا ہوں،واقعہ پر گہرا افسوس ہے، نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد سے مطمئن ہوں ،سکیورٹی حکاام اور سول انتظامیہ ایک پیج پر ہیں،افغانستان میں امن قائم ہونے تک پاکستان میں امن مشکل ہے، جب کوئی مر نے کے لئے آتا ہے تو آپ سب کو پتہ ہے اسے روکنا مشکل ہوتا ہے، یونیورسٹی کے اپنے 50,60گارڈز ہیں۔

وہ بدھ کو سکاٹ لینڈ کے دارالحکومت ایڈن برگ سے نجی ٹی وی سے گفتگو کررہے تھے۔وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے کہاکہ سانحہ چارسدہ کی شدید مذمت کرتا ہوں،واقعہ پر گہرا افسوس ہے، نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد سے مطمئن ہوں ،سکیورٹی حکاام اور سول انتظامیہ ایک پیج پر ہیں، دہشتگردی کے واقعات میں تیزی پر تشویش ہے،اس سانحہ کی وجہ سے دورہ یورپ مختصر کر دیا ہے، شام تک واپس پہنچ رہا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد سے مطمئن ہوں ،سکیورٹی حکاام اور سول انتظامیہ ایک پیج پر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان میں امن قائم ہونے تک پاکستان میں امن مشکل ہے ،دو دن پہلے پشاور میں سکول پر دہشتگردوں کے حملے کی دھمکی تھی ،یونیورسٹیز کو اسلحہ لائسنس جاری کئے گئے تاہم انہیں خود بھی اپنی سکیورٹی بہتر بنانی چاہیے۔ دہشتگردی کے خلاف حالت جنگ میں ہیں ، ابھی دہشتگردی مکمل طور پر ختم نہیں ہوئی ،دہشتگردی کے خاتمے کے لئے بھر پور کوشش کر رہے ہیں۔ پرویز خٹک نے کہا کہ سکیورٹی فورسز دہشتگردی کے خاتمے کے لئے بھر پور کوشاں ہے تاہم یونیورسٹیوں کو خود بھی اپنی سکیورٹی بہتر بنانا چاہیے۔

وقت اشاعت : 20/01/2016 - 15:17:01

اپنی رائے کا اظہار کریں