لاہور ہائیکورٹ کا محکمہ تعلیم میں ایجوکیٹرز کی تقرریاں روکنے کا حکم
تازہ ترین : 1

لاہور ہائیکورٹ کا محکمہ تعلیم میں ایجوکیٹرز کی تقرریاں روکنے کا حکم

عدالت نے حکومت پنجاب، سیکرٹری سکولز سمیت دیگر فریقین سے یکم دسمبر تک جواب طلب کرلیا

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 نومبر2016ء) لاہور ہائیکورٹ نے محکمہ تعلیم میں ای ایس ای میں سائنس اور ریاضی میں ایجوکیٹرز کی تقرریاں روکنے کا حکم دیتے ہوئے حکومت پنجاب، سیکرٹری سکولز سمیت دیگر فریقین سے یکم دسمبر تک جواب طلب کرلیا۔تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس محمد قاسم خان نے عمر حیات کی درخواست پر سماعت کی، درخواستگزار نے موقف اختیار کیا کہ لاہور ڈی سی او اور این ٹی ایس کے اشتہارات کی شرائط میں فرق ہے، این ٹی ایس کی شرائط سخت ، ڈی سی او کی شرائط میں نرمی برتی گئی ہے کئی امیدواروں کے ساتھ امتیازی سلوک برتا گیا درخواستگزار نے عدالت سے استدعا کی کہ محکمہ تعلیم کے ای ایس ای میں ہونے والی ایجوکیٹر بھرتیوں کو کالعدم قرار دیا جائے، جس پر عدالت نے محکمہ تعلیم میں ایجوکیٹرز کی تقرریاں روکنے کا حکم دیتے ہوئے حکومت پنجاب، سیکرٹری سکولز سمیت دیگر فریقین سے یکم دسمبر تک جواب طلب کرلیا۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 25/11/2016 - 16:29:07

اس خبر پر آپ کی رائے‎