پسند کی شادی کرنے کے بعد بیان ریکارڈ کرانے عدالت آنے والی لڑکی کو بھائی نے فائرنگ ..
تازہ ترین : 1

پسند کی شادی کرنے کے بعد بیان ریکارڈ کرانے عدالت آنے والی لڑکی کو بھائی نے فائرنگ کرکے شدیدزخمی کردیا

لاہور( اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 29مارچ 2014ء)پسند کی شادی کرنے کے بعد سیشن کورٹ میں بیان ریکارڈ کرانے کے لئے آنے والی لڑکی کو بھائی نے فائرنگ کرکے شدیدزخمی کردیا ، وکلاء نے عدالتوں میں سکیورٹی کی ناقص صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے شدید احتجاج کیا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ گوجرانوالہ کی رہائشی حمیرا نے چند روز قبل امجدنامی شخص سے پسند کی شادی کی تھی اور وہ امجد کے حق میں بیان دینے کے لئے ہفتہ کی صبح اپنے وکیل رانا شہبازکے ہمراہ جب سیشن کورٹ آئی تو وہ ابھی گاڑی میں ہی تھی کہ اس کے بھائی اختر نے اندھا دھند فائرنگ کردی اور فرار ہو گیا ۔

فائرنگ کے بعد بھگدڑ مچ گئی اور لوگ اپنی جانیں بچانے کے لئے بھاگ کھڑے ہوئے ۔حمیرا کو شدید زخمی حالت میں میو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔بتایا گیاہے کہ حمیرا کو چھ گولیاں لگیں اور اسکی حالت تشویشناک ہے ۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ واقعے کا مقدمہ درج کر کے ملزم کی گرفتار کے لئے کارروائی کا آغاز کر دیا ہے۔دوسری طرف وکلاء نے عدالتوں میں سکیورٹی کے ناقص صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے شدید احتجاج کیا ہے ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 29/03/2014 - 14:14:35

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں