ٹریفک وارڈن پربیٹوں کے تشدد کی پاداش میں سیکرٹری پنجاب اسمبلی برطرف
تازہ ترین : 1
ٹریفک وارڈن پربیٹوں کے تشدد کی پاداش میں سیکرٹری پنجاب اسمبلی برطرف

ٹریفک وارڈن پربیٹوں کے تشدد کی پاداش میں سیکرٹری پنجاب اسمبلی برطرف

لاہور(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 28مارچ 2014ء)وزیراعلی پنجاب شہباز شریف نے سیکرٹری پنجاب اسمبلی رائے ممتاز کے بیٹوں کا ٹریفک وارڈن پر تشدد کا نوٹس لیتے ہوئے سیکرٹری پنجاب اسمبلی کو عہدے سے برطرف کر دیا۔ وزیراعلی پنجاب شہباز شریف نے سیکرٹری پنجاب اسمبلی رائے ممتاز کے بیٹوں رائے افضل اور رائے نجف کا ساتھوں کے ہمراہ ٹریفک وارڈن پر تشدد کا نوٹس لیتے ہوئے رائے ممتاز کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا ہے۔

دوسری جانب پولیس نے رائے ممتاز کے دونوں بیٹوں کو گرفتار کر کے ضلع کچہری میں پیش کیا جہاں عدالت نے ملزمان کی ضمانت منظور کرتے ہوئے رہا کرنے کا حکم دے دیا جب کہ واقعے کے 4 ملزمان تاحال مفرور ہیں جن کی تلاش جاری ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ روز فیروز پور روڈ پر ڈٹن تھانے کی حدود میں ٹریفک وارڈن وقاص نے جب ون وے کی خلاف ورزی پر سیکرٹری پنجاب کے بیٹوں کو روکنے کی کوشش کی تو انھوں نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر ٹریفک وارڈن کی پٹائی لگا دی تھی۔ ٹریفک وارڈن کا کہنا تھا کہ رائے افضل اور رائے نجف کی جانب سے انھیں جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دی گئیں۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 28/03/2014 - 12:03:00

متعلقہ عنوان :

قارئین کی رائے :

  • ٔوحید گجر کی رائے : 29/03/2014 - 05:24:58

    لاہور میں ٹریفک وارڈن کو پیٹنے والے سیکرٹری پنجاب اسمبلی کے بیٹوں کی تو ضمانت نیں ہونی چاہے۔اور ان کو سزا ہونی چایئے۔

    اس رائے کا جواب دیں
  • صہیب نزیر کی رائے : 28/03/2014 - 12:36:49

    وارڈن کے ساتھ زیادتی کرنے کی سزا قصور واروں کو لازمی ملنی چاہیےلیکں ان کے والد کو نوکری سے ہٹانا کہاں کا انصاف ہے .کہیں تو ہمیں سیاست کی جان چھوڑدینی چاہیے .

    اس رائے کا جواب دیں

اپنی رائے کا اظہار کریں