محنت کشوں کے گردے نکالنے والے گروہ کے سر گرم ہونے کا انکشاف ،گروہ میں سرکاری ہسپتالوں ..
تازہ ترین : 1
محنت کشوں کے گردے نکالنے والے گروہ کے سر گرم ہونے کا انکشاف ،گروہ میں ..

محنت کشوں کے گردے نکالنے والے گروہ کے سر گرم ہونے کا انکشاف ،گروہ میں سرکاری ہسپتالوں کے سرجن بھی شامل ، لاہور کے 18 سالہ کاشف کے دونوں گردے نکال لئے گئے ،بھوانہ میں دفن کر دیا گیا‘ نجی ٹی وی

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔22مارچ۔2014ء)صوبائی دارالحکومت میں محنت کشوں کے گردے نکالنے والے گروہ کے سر گرم ہونے کا انکشاف ہوا ہے ،گروہ میں سرکاری ہسپتالوں کے سرجن بھی شامل ہیں، لاہور کے 18 سالہ کاشف کے دونوں گردے نکال لئے گئے اور بھوانہ میں دفن کر دیا گیا۔نجی ٹی وی کے مطابق دو ماہ پہلے فیکٹری ایریا کے رہائشی 18 سالہ نوجوان کاشف کے دونوں گردے دھوکے سے نکال لئے گئے اور مرنے کے بعد اسے بھوانہ میں دفن کر دیا گیا۔

کاشف کے اہل خانہ نے اس کے اغوا ء کی رپورٹ درج کرائی۔ پولیس نے مقتول کا موبائل فون استعمال کرنے والے آصف کا سراغ لگایا اور اسے بھوانہ سے گرفتار کر لیا۔

تفتیش کے دوران انکشاف ہوا کہ آصف لاہور کے ایک سرکاری ہسپتال کے سرجن ڈاکٹر فواد چوہدری کے گروہ کا کارندہ ہے جو محنت کشوں کے گردے نکالنے والے گروہ کا سرغنہ ہے۔ ملزم نے عدالت میں بیان دیا کہ وہ ڈاکٹر فواد چوہدری کی ہدایت پر کاشف کی لاش لاہور سے گاڑی پر بھوانہ لایا اور یہاں سنسان مقام پر دفن کر دیا۔

مجسٹریٹ کی ہدایت پر قبر کشائی کی گئی تو کاشف کی ہسپتال کی چادر میں لپٹی لاش ملی جس کے دونوں گردے غائب تھے۔ بتایا گیا ہے کہ اس کے گروہ میں کئی ڈاکٹر اور سرکاری ہسپتالوں کے ملازم بھی شامل ہیں۔ پچھلے سال 16ستمبر کو پولیس نے داتا دربار کے قریب چھاپہ مار کر ایک مکان میں زنجیروں میں جکڑے سات افراد بازیاب کرائے تھے۔ ڈاکٹر فواد چوہدری کے گینگ نے ان افراد کے اگلے روز گردے نکالنے تھے۔ فواد چوہدری سمیت تین ڈاکٹروں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے لیکن کسی ڈاکٹر کو آج تک گرفتار نہیں کیا جا سکا ۔

وقت اشاعت : 22/03/2014 - 23:03:09

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں