ملک میں سالانہ ایک لاکھ 39 ہزار افراد میں کینسر کی تشخیص ہو رہی ہے‘ رپورٹ ،پھلو ..
تازہ ترین : 1

ملک میں سالانہ ایک لاکھ 39 ہزار افراد میں کینسر کی تشخیص ہو رہی ہے‘ رپورٹ ،پھلو ں اور سبزیوں کے کھانے سے کینسر کے خلاف مدافعتی نظام بحال ہو سکتا ہے‘ حکماء

لاہور ( اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 3 فروری 2014ء) پاکستان میں سالانہ ایک لاکھ 39 ہزار افراد میں کینسر کی تشخیص ہورہی ہے، جبکہ یومیہ 381 افراد کینسر میں مبتلا اور 278 افراد ہلاک ہو رہے ہیں۔ ایک رپورٹ کے مطابق مردوں کے مقابلہ میں اس مرض کی تشخیص میں زیادہ تر خواتین چھاتی کے کینسر کا شکار ہوئی ہیں کیونکہ غیر معیاری اور غیر متناسب خواراک انسانی وجود کی 80 فیصد بیماریوں کی وجہ ہے جن میں سے بعض بیماریاں جان لیوا بھی ہو سکتی ہیں۔

اس حوالے سے پروفیسر حکیم سید عمران فیاض، حکیم محمد افضل میو، حکیم محمداحمد سلیمی نے کہا کہ سبزیوں اور پھلوں میں بھرپور نباتات اور دیگر اجزاء موجود ہوتے ہیں جو کہ کینسر کے خلاف معاون ثابت ہو تے ہیں۔ کینسر میں بادام، امرود، ٹماٹر، پیاز، اجوائن، سلاد کے پتے،ا سٹابری، شہد، گاجر کا جوس، براکلی، گوبھی، چقندر، ہلدی، انناس، رس بھری، شکر قندی، سامن مچھلی، السی کے بیج اور انار کا استعمال اس مرض کے خاتمہ میں انتہائی معاون ثابت ہو تا ہے۔ اسکے علاوہ سبزیوں اور پھلوں کے استعمال سے جسم کی قوت مدافعت کو بڑھایا جا تا ہے تاکہ وہ کینسر کے خلاف دفاع کر سکے۔

وقت اشاعت : 03/02/2014 - 14:43:59

اپنی رائے کا اظہار کریں