آئی سی سی میں اجارہ داری قائم رکھنے کیلئے بے تاب بھارت اور انگلینڈ نے پاکستان کو ..
تازہ ترین : 1
آئی سی سی میں اجارہ داری قائم رکھنے کیلئے بے تاب بھارت اور انگلینڈ نے ..

آئی سی سی میں اجارہ داری قائم رکھنے کیلئے بے تاب بھارت اور انگلینڈ نے پاکستان کو گھیرے کیلئے ڈورے ڈالنا شروع کر دیئے

لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 25جنوری 2014ء)آئی سی سی میں اجارہ داری قائم رکھنے کیلئے بے تاب بھارت اور انگلینڈ نے پاکستان کو گھیرے کیلئے ڈورے ڈالنا شروع کر دیئے ہیں میڈیا رپورٹ کے مطابق بھارت، آسٹریلیا اور انگلینڈ نے انٹرنیشنل کرکٹ پر اپنی حکمرانی مسلط کر نے کیلئے دن رات ایک کر دیا تاہم خواب پاکستا ن کے ساتھ کے بغیر تعبیر نہ ہو سکے پہلے بی سی سی آئی کے صدر سری نواسن کے بعدانگلش کرکٹ بورڈ کے چیئرمین جائلز کلارک نے ذکاء اشرف سے رابطہ کر نے پر مجبور ہوگئے انگلینڈ کرکٹ بورڈ نے پیغام بھیجا کہ 28 جنوری کو بات چیت کریں اور و طرفہ سیریز کی کچھ باتیں ہونگی میڈیا رپورٹ کے مطابق دونوں کرکٹ بورڈز، آئی سی سی کے اجلاس میں ورکنگ گروپ کے پوزیشن پیپر پر پاکستان کا ووٹ حاصل کرنا چاہتے ہیں۔

ایک جانب بھارت اور انگلینڈ پاکستان کو سیٹ کرنے کی کوششوں میں لگے ہیں، تو دوسری جانب بنگلہ دیش نے بگ تھری کی سپورٹ کا خود کش فیصلہ کرلیا ہے۔اگر یہ ڈرافٹ ہو بہو نافذ ہوگیا تو پھر بنگلہ دیش رینکنگ میں ٹاپ 8 میں نہ ہونے کی وجہ سے ٹیسٹ کرکٹ سے باہر ہوجائے گا تاہم اسے دیگر مالی فائدے ضرور ہوں گے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 25/01/2014 - 13:40:40

متعلقہ عنوان :

قارئین کی رائے :

  • mohammad afaq Says : 26/01/2014 - 06:40:27

    p,c,b ko ab kissi bhi surat in ki baat nahi manni chaey kissi bhi surat matlab kissi bhi bharose par hindu bania kabhi bhi pakistan ka kher khwa nahi ho sakta india ne jis tarha pakistan mein in,t cricket bandh karwai howi hai sab ko is ka ilam hai agr ab zaka ashraf in ki kissi bhi chaal mein aageya to quom is ko kabhi muaf nahi kare gi zaka sab ko achi tarha pata hai kese yeh in ke piche piche chkar marte the ke bus ek bar apni taim pakistan bhej dein par inhuon ney apni aankhein hi bandh kar lee thi soo ab pakistan ki bari hai ke apni aankhuo ke sath sath kan bhi bandh kar ley

    Reply to this comment

اپنی رائے کا اظہار کریں