جامعہ بنوریہ عالمیہ میں وفاقی اردو یونیورسٹی سے ملحق مدارس کے علماء کا اجلاس
تازہ ترین : 1

جامعہ بنوریہ عالمیہ میں وفاقی اردو یونیورسٹی سے ملحق مدارس کے علماء کا اجلاس

مدارس کے طلبہ کا عصری علوم کی طرف رجحان مثبت اور قابل تحسین ہے ، مفتی محمد نعیم

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔09 اپریل۔2015ء) معروف علمی و دینی درسگاہ جامعہ بنوریہ عالمیہ میں رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم کی زیر صدارت وفاقی اردو یونیورسٹی سے ملحقہ دینی مدارس کا اجلاس منعقد ہوا،جس میں وفاقی اردویونیورسٹی MA. ، ایم فل اورPHDمیں زیر تعلیم مدارس دینیہ کے طلبہ اور ملحقہ مدارس دینیہ کے منتظمین نے شرکت کی،اجلاس میں مدارس میں عصری علوم کے فروغ کے حوالے سے اردو یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر ظفر اقبال کی خدمات کوخوب سراہا گیا،اجلاس میں اردو یونیورسٹی میں زیر تعلیم مدارس کے طلبہ نے علماء کرام کو یونیورسٹی میں تعلیم کے حوالے مشکلات اورٍ احوال سے آگاہ کیا اس موقع پر اجلاس میں موجود طلبہ کرام کہنا تھاکہ ڈاکٹر ظفر اقبال کے وائس چانسلر بننے کے بعدیونیورسٹی تعلیمی رینکنگ میں چھٹے نمبرپر آئی ہے جس کی سب سے بڑی وجہ ڈاکٹر ظفر اقبال کی علم دوست پالیسیاں اور ان کی پرخلوص خدمات ہیں ، گذشتہ ایک عرصہ سے بعض عناصر کی جانب سے ڈاکٹر ظفراقبال کے خلاف بلاوجہ پروپیگنڈہ کرکے یونیورسٹی کے ماحول خراب کیا جارہاہے جس سے ہماری تعلیم متاثر ہورہی ہے اور یونیورسٹی کی ساکھ کو شدید نقصان پہنچ رہاہے،اجلاس میں موجود علماء کرام نے طلبہ کی شکایات کو سننے کے بعدفیصلہ کیا کہ وہ جلد اس حوالے سے اعلیٰ حکام سے ملاقات کرکے اپنے تحفظات سے آگاہ کریں گے ۔

اجلاس میں موجود علماء کرام نے حکومت اور متعلقہ اداروں کومتبہ کیا کہ وہ یونیورسٹی کے تعلیمی ماحول کو خراب کرنے والے عناصر کے خلاف فی الفور کاروائی کریں، ڈاکٹر ظفر اقبال کا کیس عدالت عالیہ میں زیر سماعت ہے ان کے خلاف مہم جوئی غیر قانونی اور غیر اخلاقی ہے،علماء کرام نے کہاکہ منفی مہم جوئی کے ذریعے یونیورسٹی کی تعلیمی ساکھ کو نقصان پہنچایا جارہاہے جوکہ ناقابل برداشت ہے۔

اجلاس کے آخر میں صدر مجلس جامعہ بنوریہ عالمیہ کے رئیس وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم نے طلبہ اور علماء سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ دینی اداروں کا عصری علوم کی طرف تیزی سے بڑھتاہوا رجحان قابل تحسین ہے،علماء کرام اعلیٰ تعلیم سے آراستہ ہوکر معاشرے میں اہم کردار ادا کررہے ہیں، انہوں نے کہاکہ مجھے یہ دیکھ کر خوشی ہوتی ہے کہ مدارس دینیہ کے ہزاروں طلبہ وطن عزیز کی مختلف یونیورسٹیز میں زیرتعلیم اور مدارس کے فضلاء مختلف یونیورسٹیز کے شعبہ جات میں نمایا تعلیمی خدمات انجام دے رہے ہیں،ملا اور مسٹر کی تفریق سے بالا تر ہوکرمدارس اور یونیورسٹیز کے درمیان فروغ تعلیم کا رشتہ اہم ہے اور اسے مضبوط بنانے کی ضرورت ہے، وفاقی اردو یونیورسٹی کے وائس چانسلر ڈاکٹر ظفرا قبال کا کردار اس سلسلے میں بہت اہمیت کا حامل ہے۔

وقت اشاعت : 09/04/2015 - 18:15:52

اپنی رائے کا اظہار کریں