سندھ کاکاشت کار کم نرخ پر گندم فروخت کرنے پر مجبور
تازہ ترین : 1

سندھ کاکاشت کار کم نرخ پر گندم فروخت کرنے پر مجبور

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔یکم اپریل۔2015ء)محکمہ خوراک کی عدم توجہ کے باعث سندھ کا کاشت کار، 1300 روپے سرکاری نرخ کے بجائے 1050 روپے فی من پر گندم ٹریڈرز کو بیچنے پر مجبور ہے۔سندھ آبادگار بورڈ کے نائب صدر محمود نواز نے اس حوالے سے کہا ہے کہ سندھ میں گندم کی فصل تیار ہے لیکن محکمہ خوراک سندھ کی جانب سے باردانے کی تقسیم کے حوالے سے ناقص کاکردگی کے باعث کاشت کار مڈل مین کو سرکاری نرخ سے کم ریٹ پر گندم بیچنے پر مجبور ہے۔انہوں نے کہا کہ کاشت کارکو استحصال سے بچانے کیلئے صوبائی حکومت گندم کی خریداری کے ہدف کو 9 لاکھ ٹن سے بڑھادے اور باردانے کی تقسیم منصفانہ اور شفاف انداز سے کی جائے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 01/04/2015 - 16:52:00

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں