ایران کے ساتھ مذاکرات میں ’رکاوٹیں‘ تاحال موجود ہیں، مغربی سفارت کار ،تین بڑے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل مارچ

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
تاریخ اشاعت: 2015-03-31
-

تلاش کیجئے

ایران کے ساتھ مذاکرات میں ’رکاوٹیں‘ تاحال موجود ہیں، مغربی سفارت کار ،تین بڑے معاملات پر اتفاقِ رائے ہونا باقی ،یہ ”ہاں یا نا“ کا وقت ہے،صحافیوں سے گفتگو

لوزین (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔31 مارچ۔2015ء) ایران کے جوہری پروگرام پر معاہدے کے بنیادی خدوخال طے کرنے کی حتمی تاریخ آج 31 مارچ کو ختم ہونے سے قبل ایک مغربی سفارت کار کا کہنا ہے کہ تین بڑے معاملات پر اتفاقِ رائے ہونا باقی ہے۔ سوئٹزر لینڈ کے شہر لوزین میں پیر کو ایران کے جوہر ی معاہدے کے حوالے سے p5+1 اور ایران کے مابین اہم مذاکرات کے بعد سفارت کار نے صحافیوں کو بتایا کہ ایران اور چھ عالمی طاقتوں کے درمیان یہ طے ہونا باقی ہے کہ اس معاہدے کی میعاد کیا ہو گی، کتنی جلدی اقتصادی پابندیاں اٹھائی جائیں گی، اور اگر ایران نے معاہدے کی خلاف ورزی کی تو پابندیاں کیسے دوبارہ عائد کی جائیں گی۔

سفارت کار نے معاہدے پر اتفاقِ رائے پیدا کرنے کے لیے منگل کی حتمی تاریخ سے پہلے فیصلوں کی فوری نوعیت کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ یہ ”ہاں یا نا“ کا وقت ہے۔ایران کے وزیر خارجہ جواد ظریف پیر کو سویٹزرلینڈ میں امریکہ، برطانیہ، چین، فرانس، روس اور جرمنی کے وزرائے خارجہ سے ملاقات کر رہے ہیں۔ اس ملاقات میں فریقین ڈیڈلائن سے پہلے ایران کے جوہری پروگرام سے متعلق ایک حتمی معاہدے کے لیے طریقہ کار پر اتفاق رائے پیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

سفارت کار آج منگل

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

31-03-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان