حکومت،پی ٹی آئی جوڈیشل کمیشن بارے معاہدے کی دستاویزات منظرعام پرآگئیں ، معاہدہ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر مارچ

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-23
تاریخ اشاعت: 2015-03-23
تاریخ اشاعت: 2015-03-23
تاریخ اشاعت: 2015-03-23
تاریخ اشاعت: 2015-03-23
تاریخ اشاعت: 2015-03-23
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 20/01/2017 - 09:09:59 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:05 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:06 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:09 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:16 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:11 اسلام آباد کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

حکومت،پی ٹی آئی جوڈیشل کمیشن بارے معاہدے کی دستاویزات منظرعام پرآگئیں ، معاہدہ سات صفحات پرمشتمل ، کمیشن میں سپریم کورٹ کے تین ججزشامل ہوں گے،حکومت الیکشن دھاندلی کی تحقیقات آئی ایس آئی اورایم آئی سے کروانے پررضامند، جوڈیشل کمیشن مجوزہ آرڈیننس کے تحت کام کریگا، اسکی تفصیلات پارلیمانی رہنماوٴں کوبھیجوادیں ،اسحاق ڈار،وزیراعظم نوازشریف خودجوڈیشل کمیشن کے مجوزہ آرڈیننس پرپارلیمانی رہنماوٴں کواعتمادمیں لیں گے،میڈیاسے گفتگو

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔23 مارچ۔2015ء)حکومت اورتحریک انصاف کے درمیان ہونے والے معاہدے کی دستاویزات منظرعام پرآگئی، حکومت اورپی ٹی آئی میں جوڈیشل کمیشن کے قیام پرہونے والامعاہدہ سات صفحات پرمشتمل ہے ،مجوزہ مسودے کے مطابق جوڈیشل کمیشن میں سپریم کورٹ کے تین ججزشامل ہوں گے ،جبکہ حکومت نے الیکشن میں دھاندلی کی تحقیق آئی ایس آئی اورایم آئی سے بھی کروانے پررضامندی کااظہارکیاگیااوریہ بھی فیصلہ کیاگیاکہ دھاندلی ثابت ہونے پروزیراعظم نوازشریف خوداسمبلی توڑدیں گے اوربیک وقت ملک بھرمیں انتخابات کروائیں گے ،اس کے علاوہ مجوزے میں بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی )اورپاکستان پیپلزپارٹی کے دستخط کی جگہ رکھی گئی ہے ،جس میں دونوں جماعتوں کے سربراہوں سے دستخط لئے جائیں گے۔

ادھروفاقی وزیرخزانہ اسحاق ڈارنے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

23-03-2015 :تاریخ اشاعت