عدلیہ مخالف بینرزکیس، سپریم کورٹ کی ملوث ملزمان کیخلاف حتمی تحقیقات کیلئے آئی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ مارچ

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
تاریخ اشاعت: 2015-03-20
- مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

عدلیہ مخالف بینرزکیس، سپریم کورٹ کی ملوث ملزمان کیخلاف حتمی تحقیقات کیلئے آئی جی اسلام آباد کو آٹھ اپریل تک آخری مہلت

اسلام آباد( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔20 مارچ۔2015ء ) سپریم کورٹ نے وفاقی دارالحکومت کے ریڈ زون میں عدلیہ مخالف بینرز لگانے میں مبینہ طور پر ملوث ملزمان کیخلاف حتمی تحقیقات کیلئے آئی جی اسلام آباد طاہر عالم کو آٹھ اپریل تک آخری مہلت دے دی ہے اور ان پر واضح کردیا ہے کہ اگر وہ تحقیقات میں کامیاب نہ ہوسکے تو پھر یہ معاملہ کسی اور ادارے کے سپرد کردیا جائے گا ۔ جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئے ہیں کہ اسلام آباد کے حساس ترین علاقے میں عدلیہ مخالف بینرز لگائے گئے مگر نو ماہ کا عرصہ گزرنے کے باوجود پولیس تاحال ملزمان اور پس پردہ محرکات کو سامنے نہیں لاسکی ہے ۔

جسٹس اعجاز چوہدری نے ریمارکس دیئے ہیں کہ یہ کہنا بہت آسان ہے کہ اس طرح کا کام کے پیچھے ایجنسیاں ہیں ایجنسیوں کو جسٹس جواد ایس خواجہ سے کیا پرخاش ہوسکتی ہے ۔ ایجنسیوں کا کہہ کر ہمیں ٹرک کی بتی کے پیچھے نہ لگایا جائے ہم نے تو نہیں سنا کہ ایجنسیاں ایسا کام کرتی ہیں اگر کسی نے یہ کام کیا بھی تو وہ انفرادی حیثیت سے کیا ہوگا اس میں سارے ادارے کو شامل کرنا دانشمندی نہیں ۔ پولیس سمجھتی ہے کہ ملزم راشد کا تعلق حساس ادارے کے کسی ملازم کے ساتھ تھا اور اس حوالے سے کوئی ٹھوس شہادت موجود ہے تو عدالت کو بتایا جائے عدالت وزارت دفاع کے ذریعے ان کو طلب کرے گی انہوں نے یہ ریمارکس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

20-03-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان