وزیراعلیٰ پنجاب کی زیر صدارت اہم اجلاس،سفارتکاروں،وفاقی وزراء اوراعلی حکام کی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات مارچ

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
تاریخ اشاعت: 2015-03-19
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

تلاش کیجئے

وزیراعلیٰ پنجاب کی زیر صدارت اہم اجلاس،سفارتکاروں،وفاقی وزراء اوراعلی حکام کی شرکت،وفاقی اورپنجاب حکومتوں کی طرف سے گیس سے بجلی پیدا کرنے کے 3600میگاواٹ کے تین منصوبے لگانے کا فیصلہ، منصوبے شیخوپورہ ،قصور اورجھنگ کے اضلاع میں لگائے جائینگے،2400میگاواٹ کے منصوبوں کیلئے وفاقی اور1200میگاواٹ کیلئے صوبائی حکومت وسائل فراہم کرے گی،وزیراعظم کی قیادت میں توانائی بحران ،دہشتگردی کے خاتمے اورمعیشت کی بحالی کیلئے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات کیے جارہے ہیں:شہبازشریف

اسلام آباد/لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔19 مارچ۔2015ء) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کی زیرصدارت آج اسلام آباد میں توانائی کے منصوبوں کے حوالے سے اہم بریفنگ اجلاس ہوا۔جس میں وفاقی اورپنجاب حکومتوں کی طرف سے گیس سے بجلی پیدا کرنے کے 3600میگاواٹ کے تین منصوبے لگانے کا فیصلہ کیاگیا۔یہ منصوبے شیخوپورہ کے علاقے بھیکی،قصور کے علاقے بلوکی اورجھنگ کے علاقے حویلی بہادرشاہ میں لگائے جائیں گے۔

2400میگاواٹ کے دو منصوبوں کیلئے وفاقی حکومت جبکہ1200میگاواٹ کے ایک منصوبے کیلئے پنجاب حکومت وسائل فراہم کرے گی۔اجلاس میں چین،ترکی،اٹلی،سپین اوریونان کے سفیروں کے علاوہ کینیڈا،جنوبی کوریااورجاپان کے کمرشل قونصلروں نے شرکت کی ۔ وزیراعلی پنجاب محمد شہبازشریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم محمد نوازشریف کی قیادت میں توانائی بحران کو تیزرفتاری سے حل کرنے کیلئے کوشاں ہیں۔

حکومت توانائی کی کمی کے مسئلے سے نمٹنے ،معیشت کی بحالی اوردہشت گردی کے خاتمے کیلئے ترجیحی بنیادوں پر کام کررہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ عوام کو لوڈ شیڈنگ سے نجات دلانے،زرعی اورصنعتی شعبہ کیلئے بجلی کی فراہمی کی غرض سے 2017ء تک توانائی کے منصوبے مکمل کریں گے۔ملک سے بجلی کا بحران مستقبل بنیادوں حل کرنے کیلئے سنجیدگی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

19-03-2015 :تاریخ اشاعت