پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے ایف بی آر میں 10ارب روپے سے زائد کے 51آڈٹ پیراؤں کو ادائیگیوں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ مارچ

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:05 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:06 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:09 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:16 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:11 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:13 اسلام آباد کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے ایف بی آر میں 10ارب روپے سے زائد کے 51آڈٹ پیراؤں کو ادائیگیوں کے بغیر نمٹا دیا،آڈٹ حکام نے ایف بی آر کے مالی سال1996-97ء کی آڈٹ رپورٹ میں لینڈ کسٹمر اورسنٹرل ایکسائز شعبہ میں بھاری مالی بدعنوانی کا کھوج لگایا، حکومت کو ایف بی آر کے حکام سے یہ رقم وصول کر نے کی ہدایت

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔13 مارچ۔2015ء)پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے ایف بی آر میں 10ارب روپے سے زائد کے 51آڈٹ پیراؤں کو ادائیگیوں کے بغیر نمٹا دیا،آڈٹ حکام نے ایف بی آر کے مالی سال1996-97ء کی آڈٹ رپورٹ میں لینڈ کسٹمر اورسنٹرل ایکسائز شعبہ میں بھاری مالی بدعنوانی کا کھوج لگایا اور حکومت کو ہدایت کی کہ وہ ایف بی آر کے حکام سے یہ رقم وصول کرے۔ایف بی آر کی گرانٹ 51میں یہ بھاری مالی بدعنوانی کا کھوج لگایا۔

آڈٹ حکام نے بی اے سی کی ذیلی مانیٹرنگ کمیٹی کے اجلاس جس کی صدارت ایم

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13-03-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان