حلقہ این اے 125 میں مبینہ دھاندلی ،ٹربیونل نے سعد رفیق اور حامد خان کو اپنی مرضی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ مارچ

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
تاریخ اشاعت: 2015-03-13
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

تلاش کیجئے

حلقہ این اے 125 میں مبینہ دھاندلی ،ٹربیونل نے سعد رفیق اور حامد خان کو اپنی مرضی کے پانچ پانچ پولنگ اسٹیشن نادرا سے تصدیق کرانے کی پیشکش کر دی

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔13 مارچ۔2015ء)حلقہ این اے 125 میں مبینہ دھاندلی کیس کی الیکشن ٹربیونل میں سماعت ‘ دھاندلی کیس کی سماعت کرنے والے ٹربیونل نے دونوں رہنماؤں کو اپنی مرضی کے پانچ پانچ پولنگ اسٹیشن نادرا سے تصدیق کرانے کی پیشکش کرتے ہوئے سماعت 16 مارچ تک ملتوی کر دی۔ جمعرات کے روز حلقہ این اے 125 میں مبینہ دھاندلی کے خلاف الیکشن ٹربیونل میں تحریک انصاف کے رہنما حامد خان کی درخواست کی سماعت ہوئی ہے۔

الیکشن ٹربیونل نے مسلم لیگ ن کے رہنما وزیر ریلوے سعد رفیق اور حامد خان کو پیشکش کی ہے کہ دونوں رہنما اپنی مرضی کے پانچ پانچ پولنگ اسٹیشن کی ووٹوں کی تصدیق نادرا سے کرانے کے لئے 16 مارچ تک پولنگ اسٹیشن کے نام بتائیں جس کے بعد الیکشن ٹربیونل نادرا کو ووٹوں کی تصدیق کی درخواست کرے گا جبکہ اس سے پہلے الیکشن ٹربیونل میں تحریک انصاف کے رہنما حامد خان نے پورے حلقے کے ووٹوں کی تصدیق نادرا سے کروانے کی درخواست کی تھی جسے الیکشن ٹربیونل نے مسترد کر دیا تھا جس پر حامد خان نے دوبارہ درخواست دائر کی تھی الیکشن ٹربیونل نے سماعت 16 مارچ تک ملتوی کر دی۔

13-03-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان