سپریم کورٹ میں سندھ پولیس کی جانب سے خریدی جانے والی بلٹ پروف گاڑیوں اور دیگر اسلحے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات مارچ

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
تاریخ اشاعت: 2015-03-12
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

تلاش کیجئے

سپریم کورٹ میں سندھ پولیس کی جانب سے خریدی جانے والی بلٹ پروف گاڑیوں اور دیگر اسلحے کی خریداری میں عرفان قادر کو روسٹم چھوڑنا پڑا ، بدعنوانی کا معاملہ ہے سوالات تو ہوں گے ، اور سوالات کے جوابات تو دینا پڑینگے ۔ عدالت کا ڈیکورم ہوتا ہے جس کی پابندی سب پر لازم ہے آپ کے سوالات کرنا عدالت کا کام ہے اور جواب دینا آپ کا کام ہے ،جسٹس اعجاز چوہدری ،کیس کی مزید سماعت آج تک ملتوی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔12 مارچ۔2015ء) سپریم کورٹ میں سندھ پولیس کی جانب سے خریدی جانے والی بلٹ پروف گاڑیوں اور دیگر اسلحے کی خریداری میں عرفان قادر کو روسٹم چھوڑنا پڑا ۔ جسٹس اعجاز چوہدری نے ریمارکس دیئے ہیں کہ بدعنوانی کا معاملہ ہے سوالات تو ہوں گے ، اور سوالات کے جوابات تو دینا پڑینگے ۔ عدالت کا ڈیکورم ہوتا ہے جس کی پابندی سب پر لازم ہے آپ کے سوالات کرنا عدالت کا کام ہے اور جواب دینا آپ کا کام ہے جبکہ جسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس دیئے ہیں کہ عوام کی جیب سے ایک ارب 23 کروڑ روپے نکالے گئے یہ حساس اور سنجیدہ معاملہ ہے اس کو نظر انداز نہیں کرسکتے جبکہ وفاقی حکومت نے پولیس کی جانب سے خریداری کے مسودے کو قانون کے منافی قرار دیتے ہوئے عدالت کو بتایا ہے کہ اس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12-03-2015 :تاریخ اشاعت