چیئرمین اور ڈپٹی چیرمین سینٹ بارے ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا، فیصلے باہمی مشاورت، ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر مارچ

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
تاریخ اشاعت: 2015-03-09
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

تلاش کیجئے

چیئرمین اور ڈپٹی چیرمین سینٹ بارے ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا، فیصلے باہمی مشاورت، مفاہمت سے ہونے چاہئیں،پرویزخٹک، صوبے میں سینٹ کے انتخابات کے حوالے سے بض اپوزیشن جماعتیں چور مچا ئے شور کے فارمولے پر عمل پیرا ہیں ، مسلم لیگ ن سے کچھ ووٹ ہمیں ملے ،ہم نے اضافی ووٹ مسلم لیگ (ن) کو دیا،بلدیاتی انتخابات کیلئے ہم ایک سال قبل بھی تیار تھے ،30مئی کو ہونیوالے انتخابات کیلئے تمام انتظامات مکمل ہیں،وزیراعلی خیبرپختونخوا

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔9 مارچ۔2015ء)وزیر اعلی خیبرپختونخوا پرویزخٹک نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی کور کمیٹی میں چیئرمین اور ڈپٹی چیرمین سینٹ کے حوالے سے ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا۔جب صورت حال واضح ہوگی تو اس حوالے سے دوبارہ اجلاس میں فیصلہ کریں گے۔چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے انتخاب کے حوالے سے باہمی مشاورت اور مفاہمت سے فیصلے ہونے چاہیے اس حوالے سے تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان ہی حتمی فیصلہ کریں گے ۔

ہمارے صوبے میں سینٹ کے انتخابات کے حوالے سے بض اپوزیشن جماعتیں چور مچا ئے شور کے فارمولے پر عمل پیرا ہیں۔ تحریک انصاف کے ارکان اسمبلی نے نہ تو کوئی بارگینگ اورنہ ہارس ٹریڈنگ کی۔ سینٹ کے انتخابات میں کچھ دو اورکچھ لو سے رزلٹ اتاہے اُنہوں نے واضح کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن سے کچھ ووٹ ہمیں ملے اور ہم نے اضافی ووٹ مسلم لیگ ن کو دیا۔بلدیاتی انتخابات کیلئے ہم ایک سال قبل بھی تیار تھے تیس مئی کو ہونے والے بلدیاتی انتخابات کے لئے تمام انتظامات مکمل ہیں اور تحریک انصاف حقیقی معنوں میں اختیارات عوام کو منتقل کرے گی۔

اور اسکے لئے پہلے سے قانون سازی کی گئی پنجاب سندھ اوربلوچستان نے بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے عوام کو دھوکہ دیا ہے۔وہ اتوار کے روز نوشہرہ کے تفصیلی دورہ کے موقع پر سیاسی اور سماجی شخصیت حج محمد خان کی اہلیہ اور اے این پی کے رہنما شاہد خان خٹک کی والدہ ماجدہ کی وفات پر اظہار تعزیت اور اپنے گاؤں میں مانکی شریف میں کھلی کچہری سے خطاب اور میڈیا سے بات چیت کررہے تھے۔ اس موقع پر حج محمد خان کی رہائش گاہ پر پیر آف مانکی شریف پیر شمس الامین، اور سابق سینٹر حافظ عبدالمالک قادری، صاحبزادہ ارشد باچا وزیر اعلی کے بھائی لیاقت خان خٹک صوبائی وزیر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن میاں جمشید الدین کاکاخیل ، چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا امجد علی خان سابق صوبائی وزراء ہمایون خان ،میاں نثار گل کاکاخیل، بخت بیدارخان، اے این پی کے صوبائی جنرل سیکرٹری ایمل ولی خان، موجود تھے۔

پرویز خٹک نے کہا کہ فاٹا کے سینٹرز کے انتخاب کے حوالے سے صدراتی آرڈیننس پہلا آجاتا تو بہتر ہوتا۔ کیونکہ وفاقی حکومت کو خطرہ تھاکہ وہاں پر ہار س ٹریڈنگ ہورہی ہے۔ اوراس کو روکنے کے لیے وفاقی حکومت کوارڈیننس لانا پڑا۔ وفاقی حکومت نے سوچ سمجھ کر فیصلہ کیا ہے۔ پرویز خٹک نے کہا کہ ہمارے صوبے میں سینٹ کے انتخاب کے حوالے سے ایساہے جیسا چور مچائے شور ہم نے اپنا ووٹ لیا ہے اورکسی کا نہیں لیا۔

اپنے اتحادیوں کے ہمراہ سات امیدوار کھڑے کیے اور سات ہی سیٹیں جیتی، انھوں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

09-03-2015 :تاریخ اشاعت