بھارت کے ساتھ مذاکرات کا آغاز ایک اچھا شگون ہے، اگر دونوں ممالک مخلص ہوئے تو اچھے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات مارچ

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
تاریخ اشاعت: 2015-03-05
- مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

بھارت کے ساتھ مذاکرات کا آغاز ایک اچھا شگون ہے، اگر دونوں ممالک مخلص ہوئے تو اچھے نتائج برآمد ہوسکتے ہیں، خواجہ آصف، بھارت کی جانب سے دفاعی بجٹ میں غیرمعمولی اضافہ اس کے جنگی جنون کو بڑھا رہا ہے، جب تک شدت پسندی کا جڑ سے خاتمہ نہیں کیا جائے گا تمام عسکریت پسند تنظیموں کا خاتمہ ممکن نہیں۔وزیر دفاع کا انٹرویو

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔5 مارچ۔2015ء )پاکستان کا کہنا ہے کہ بھارت کے ساتھ مذاکرات کا آغاز ایک اچھا شگون ہے اور اگر دونوں ممالک مخلص ہوئے تو اچھے نتائج برآمد ہوسکتے ہیں۔وزیر دفاع خواجہ آصف نے برطانوی نشریاتی ادارے سے گفتگو میں کہا کہ بھارت کی جانب سے دفاعی بجٹ میں غیرمعمولی اضافہ اس کے جنگی جنون کو بڑھا رہا ہے اور خطے کے دیگر ممالک کو بھی ایسے ہی اقدامات اٹھانے پڑیں گے۔جب ان سے پوچھا گیا کہ شدت پسندی کے خلاف ملک گیر مہم محض ان تنظیموں کے خلاف دکھائی دیتی ہیں جو ریاست کو چیلنج کر رہی ہیں تو ان کا کہنا تھا کہ جب تک شدت پسندی کا جڑ سے خاتمہ نہیں کیا جائے گا تمام عسکریت پسند تنظیموں کا خاتمہ ممکن نہیں۔



اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

05-03-2015 :تاریخ اشاعت