سپریم کورٹ نے کراچی الیکٹرک کوواپڈا سے ملنے والی650میگاواٹ بجلی اور بقایا جات کی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
تاریخ اشاعت: 2015-02-26
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

سپریم کورٹ نے کراچی الیکٹرک کوواپڈا سے ملنے والی650میگاواٹ بجلی اور بقایا جات کی تفصیلات طلب کر لیں، سماعت 2ہفتے کے لئے ملتوی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 26فروری۔2015ء)سپریم کورٹ میں جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں قائم تین رکنی بینچ نے کراچی الیکٹرک کوواپڈا سے ملنے والی650میگاواٹ بجلی اور بقایا جات کی تفصیلات طلب کرتے ہوئے سماعت 2ہفتے کے لئے ملتوی کر دی ۔بدھ کو سپریم کورٹ میں کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ اور کراچی الیکٹرک (کے ای) کے واجبات سے متعلق مقدمے کی سماعت ہوئی ۔عدالت میں سیکرٹری واٹر اینڈ پاور اور سیکرٹری فنانس بھی پیش ہوئے۔

عدالت میں کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کے وکیل ابرار حسن بیماری کے باعث عدالت میں حاضر نہیں ہوسکے ۔کراچی الیکٹرک کے وکیل عابد زبیری نے عدالت سے درخواست کی کہ واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کے وکیل اپنے دلائل مکمل کر چکے ہیں لہذا سماعت جاری رکھی جائے۔جس پر عدالت نے سماعت کو جاری رکھا ۔دوران سماعت اٹارنی جنرل آف پاکستان سلمان بٹ نے عدالت کو بتایا کہ جب سے کراچی الیکٹرک(کے ای) کی نجکاری کی گئی ہے وفاقی حکومت کی ہدایت پر واپڈا کراچی الیکٹرک کو 650میگاواٹ بجلی فراہم کر رہا ہے ۔

جس کے بقایا جات کراچی الیکٹرک (کے ای) نے ادا کرنے ہیں ۔عدالت نے اٹارنی جنرل

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

26-02-2015 :تاریخ اشاعت