قومی اسمبلی کی پٹرولیم کمیٹی نے گیس پر سیس کے نفاذ کے بل کی منظوری دیدی، گھریلو ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
تاریخ اشاعت: 2015-02-25
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

قومی اسمبلی کی پٹرولیم کمیٹی نے گیس پر سیس کے نفاذ کے بل کی منظوری دیدی، گھریلو صارفین اور کمرشل میں تندور پر ٹیکس نہیں لگایا جائے گا،کمیٹی کو حکام کی یقین دہانی،ملکی پائپ لائنز کے لئے 300 ارب جبکہ ایران گیس پائپ لائن کے لئے 200 ارب روپے درکار ہیں،وزیرپٹرولیم کی کمیٹی کو بریفنگ

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 25فروری۔2015ء) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے پیٹرولیم وقدرتی وسائل نے گیس پر سیس کے نفاذ کے بل کی منظوری دیدی ہے جبکہ کمیٹی کو یقین دلایا گیا ہے کہ گھریلو صارفین اور کمرشل میں تندور پر ٹیکس نہیں لگایا جائے گا جبکہ وزیرپٹرولیم شاہد خاقان عباسی نے کمیٹی کو بتایا کہ ملکی پائپ لائنز کے لئے 300 ارب جبکہ ایران گیس پائپ لائن کے لئے 200 ارب روپے درکار ہیں۔پٹرولیم و قدرتی وسائل کمیٹی کا اجلاس منگل کو پارلیمنٹ ہاؤس میں چیئرمین چوہدری بلال احمد ورک کی صدارت میں ہوا۔

اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیر پیٹرولیم و قدرتی وسائل شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ ملکی پائپ لائنز کے لئے 300 ارب جبکہ ایران گیس پائپ لائن کے لئے 200 ارب روپے درکار ہیں۔قائمہ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

25-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان