صبر ،ہمت اور برداشت سے دہشت گردی کا مقابلہ کرنا ہے ،نواز شریف،دہشت گردی کے خلاف ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-20
تاریخ اشاعت: 2015-02-20
تاریخ اشاعت: 2015-02-20
تاریخ اشاعت: 2015-02-20
تاریخ اشاعت: 2015-02-20
تاریخ اشاعت: 2015-02-20
پچھلی خبریں -

کوئٹہ

کوئٹہ شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 21/01/2017 - 00:00:15 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 00:00:16 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:30:47 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:30:57 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:54:19 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 17:17:03 کوئٹہ کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

صبر ،ہمت اور برداشت سے دہشت گردی کا مقابلہ کرنا ہے ،نواز شریف،دہشت گردی کے خلاف جنگ پورے ملک میں شروع ہو چکی ،یہ جنگ ہر صورت جیتنی ہے،یہ جنگ ہماری آئندہ نسلوں کی بقاء کی جنگ ہے،پاکستان کو دہشت گردی کی لعنت سے ہر صورت پاک کریں گے،انسداد دہشت گردی فورس کے اہلکاروں کو جدید اسلحہ سے لیس کریں گے ،ہمارے جان بازوں کو دنیا کی کوئی طاقت شکست نہیں دے سکتی ،وزیر اعظم کا انسداد دہشت گردی فورس کی پاسنگ آؤٹ تقریب سے خطاب،بلوچستان میں بدامنی کا خاتمہ اور خوشحالی دیکھنا چاہتے ہیں‘ بگٹی قبیلے کے نقل مکانی کرنے والوں کو واپس اپنے گھروں میں لائینگے‘وزیراعظم کی طلال بگٹی کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو،پاسنگ آؤٹ پریڈ کی تقریب سے خطابقق

کوئٹہ( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 20فروری۔2015ء )وزیر اعظم میاں محمد نوازشریف نے کہا ہے کہ ہمیں صبر ،ہمت اور برداشت سے دہشت گردی کا مقابلہ کرنا ہے،دہشت گردی کے خلاف جنگ پورے ملک میں شروع ہو چکی اور اس جنگ کو ہر صورت جیتنی ہے ،یہ ہماری آنے والی نسلوں کی بقاء کی جنگ ہے،پاکستان کو دہشت گردی کی لعنت سے ہر صورت پاک کریں گے،دہشت گردی کے خلاف خنگ پوری قوم اور ادارے متحد ہیں ،دہشت گردوں کو شکست دینے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے،انسداد دہشت گردی فورس کے اہلکاروں کو جدید اسلحہ سے لیس کریں گے اور ان کی تمام ضروریات کو پورا کیا جائے گا ۔

نوجوانوں کا عزم دیکھ کر کہتا ہوں ایسے جان باز ایسے جوانوں کو دنیا کی کوئی طاقت شکست نہیں دے سکتی ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے یہاں انسداد دہشت گردی فورس کی پاسنگ آؤٹ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، بدھ کے روز وزیر اعظم تقریب میں پہنچے تو آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے وزیر اعظم کا استقبال کیا ۔اس موقع پر وزیراعلیٰ ،گورنر بلوچستان ،کور کمانڈر کوئٹہ جنرل ناصرعلی جنجوعہ سمیت صوبائی ارکان اسمبلی اوردیگراعلیٰ حکام بھی موجود تھے۔

انسداد دہشت گردی فورس نے دہشت گردوں کے خلاف کارروائیوں کا شاندار عملی مظاہرہ کیا جس میں 200 پولیس اہلکاروں پر مشتمل دستے نے شرکت کی جن میں 18 خواتین اہلکار بھی شامل تھیں،انسداد دہشت گردی فورس کی تربیت پاک آرمی نے کی ۔انسداد دہشت گردی فورس کی تربیت پانے والوں کا تعلق پولیس سے ہے جنہیں ایک ماہ میں ٹریننگ دی گئی ۔پاسنگ آؤٹ کی اختتام پر وزیر اعظم نے شاندار مظاہرہ کرنے والے اہلکاروں میں انعامات بھی تقسیم کئے ۔

اس موقع وزیراعلیٰ بلوچستان عبد المالک نے وزیر اعظم نواز شریف کو یادگاری سوینئر پیش کی جبکہ آئی جی بلوچستان نے آرمی چیف جنرل راحیل شریف کو یاد گاری سوینئر پیش کی ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ کوئٹہ میں انسداد دہشت گردی فورس کی تربیت پاسنگ آؤٹ تقریب میں شرکت کرنا میرے لئے اعزاز کی بات ہے ،جوانوں کو دیکھ کر کہتا ہوں کہ ایسے جوانوں جذبوں کو دنیا کی کوئی شکست نہیں دیکھ سکتی ۔

انسداد دہشت گردی کی تشکیل پر وزیراعلیٰ اور آئی جی بلوچستان مبارکباد کے مستحق ہیں اور انسداد دہشت گردی فورس پاسنگ آؤٹ میں شریک نوجوانوں کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔دہشت گردی کے خلاف جنگ پورے ملک میں شروع ہو چکی ہے اس جنگ کو منطقی انجام تک پہنچا ئیں گے ۔جس قوم میں ایسے جان باز نوجوان موجود ہوں ایسے جوانوں کو دنیا کی کوئی طاقت شکست نہیں دے سکتی ۔وزیر اعظم نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ کو ہر حالت میں جیتی ہے اور اسی میں ہماری آنے والے نسلوں کی بقاء ہے ۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت ملک دہشت گردی کی جنگ کی زد میں ہے فورس جوانوں سے کہتا ہوں کہ ملک میں دہشت گردی کرنے والے کسی صورت نہ بچ پائیں ان کو خاتمہ ہر حالت میں ضروری ہے ۔انہوں نے کہا کہ ملک میں امن و امان کا قیام کیلئے عملی اقدامات کررہے ہیں اورعوام کی جان و مال کی حفاظت اولین ترجیح ہے ،دہشت گردی کے خلاف پوری قوم متحد ہے ،ملک اس وقت دہشت گردی کی زد میں ہے ہمیں ہمت ،صبر او برداشت سے دہشت گردی کا مقابلہ کرنا ہے، دہشت گردی کے خلاف جنگ ہر قیمت پر جیتنی ہے۔

انہوں نے کہا کہ قوم کا ہر شہری دہشت گردی کی جنگ میں پاک فوج اور سکیورٹی اداروں کے ساتھ ہے ،دہشت گردی کے خلاف جنگ پوری قوم کی جنگ ہے ۔پاکستان کو دہشت گردی کی لعنت سے ہر صورت حال پاک کریں گے،دہشت گردی کے خلاف خنگ پوری قوم اور ادارے متحد ہیں اور اس قوم کو آگے بڑھنے سے کوئی نہیں روک سکتا،ملک میں دہشت گردوں کو شکست دینے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے،وزیر اعظم نے کہا کہ انسداد دہشت گردی فورس کے اہلکاروں کو جدید اسلحہ سے لیس کریں گے اور ان کی تمام ضروریات کو پورا کیا جائے گا ۔

ہمیں صبر ،ہمت اور برداشت سے دہشت گردی کا مقابلہ کرنا ہے۔ بعدازاں وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے طلال بگٹی سے ان کی والدہ کی وفات پر تعزیت کے بعد طلال بگٹی کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بگٹی خاندان سے دیرینہ اور خوشگوار تعلقات ہیں اور ان تعلقات کو مزید بہتر کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ طلال بگٹی سے بلوچستان کے مسائل پر تفصیلی گفتگو ہوئی ہے ان کے حل کیلئے سنجیدہ کوششیں کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں بدامنی کا خاتمہ اور یہاں خوشحالی دیکھنا چاہتے ہیں۔ اللہ تعالیٰ اس صوبے کے حالات بہتر کرے۔ وزیراعظم نے کہا کہ وزیراعلی بلوچستان سے صوبے میں ترقیاتی کاموں کے حوالے سے بات ہوئی ہے‘ جلد ہی صوبے میں ترقیاتی کاموں کا جال بچھائیں گے اور صوبے میں امن اور خوشحالی لائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بگٹی قبیلے کے نقل مکانی کرنے والوں کو واپس اپنے گھروں میں لائینگے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ عبدالمالک نے کہا ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف اور آرمی چیف کو کوئٹہ کا دورہ کرنے پر شکریہ ادا کرتا ہوں ،انہوں نے کہا کہ انسداد دہشت گردی فورس کی تربیت پانے اہلکاروں کو مبارکباد پیش کرتا ہوں ،انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کا مل کر مقابلہ کیا جا سکتا ہے اور اپنے ملک کو اس ناسور سے پاک کرنا ممکن ہے، وزیراعلیٰ نے کہا کہ بلوچستان میں امن لائیں گے اور یہاں پر ترقیاتی کاموں کا جال بچھائیں گے اور وفاقی حکومت کی پالیسی کو عملی جامعہ پہنائیں گے،انسداد دہشت گردی فورس کی تربیت کرنے والے عہد کریں کہ وہ اپنے مفاد سے بالاتر ہو کر عوام کی خدمت کریں گے اور صوبے میں امن وامان لانے کے لئے اپنا بھر پور کردار ادا کریں گے ،وزیراعلی نے کہا کہ بلوچستان میں پولیس کو سیاست سے پاک کریں گے اور پولیس فورس کو تمام وسائل فراہم کریں گے ۔

انہوں نے کہا کہ پولیس فورس میں میرٹ پر بھرتیاں ہوں گی اور پولیس فورس میں کی بھرتیوں میں سیاست کو

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

20-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان