بکتر بند گاڑیاں : آئی جی سندھ مستعفی ہوں یا نیب بھگتیں،قائمہ کمیٹی ، بکتر بند گاڑیوں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
تاریخ اشاعت: 2015-02-19
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

بکتر بند گاڑیاں : آئی جی سندھ مستعفی ہوں یا نیب بھگتیں،قائمہ کمیٹی ، بکتر بند گاڑیوں کے معاملے میں ہیوی انڈسٹریز ٹیکسلا کے ساتھ اچھا تجربہ نہیں رہا ، 17 گاڑیاں خریدیں جو ناقص ثابت ہوئیں، اس لیے سربیا سے معاہدہ کیا،ایڈیشنل ہوم سیکرٹری سندھ

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 19فروری۔2015ء)قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی دفاعی پیداوار کے چیئرمین خواجہ سہیل منصور نے آئی جی سندھ سے استفسار کیا کہ 5 کروڑ کی بکتر بند گاڑیاں 17 کروڑ میں کیوں خریدیں؟۔ آئی جی سندھ یا تو مستعفی ہوں، یا نیب کوبھگتنے کو تیار رہیں۔ایڈیشنل ہوم سیکرٹری سندھ نے کہاہے کہ بکتر بند گاڑیوں کے معاملے میں ہیوی انڈسٹریز ٹیکسلا کے ساتھ اچھا تجربہ نہیں رہا ، 17 گاڑیاں خریدیں جو ناقص ثابت ہوئیں، اس لیے سربیا سے معاہدہ کیا۔

سیکرٹری دفاعی پیداوار کاکہنا ہے کہ بی سیون لیول کی بکتر بند گاڑی کیلئے رابطہ ہی نہ کیاگیا، ایچ آئی ٹی جدید ترین بکتر بند گاڑی بنانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی دفاعی پیداوار کااجلاس اسلام آبادمیں خواجہ سہیل کی صدارت میں ہوا۔خواجہ سہیل نے آئی جی پولیس سندھ اور ہوم سیکرٹری سندھ کی عدم موجودگی پر برہمی کااظہار کیا اورکہاکہ بکتر بند گاڑیوں کے معاملے پر آئی جی سندھ عہدہ چھوڑگئے، وہ موجود آئی جی کووارننگ دیتے ہیں کہ مستعفی ہوجائیں یانیب کو بھگتنے کے لئے تیار رہیں۔

چیئرمین کمیٹی نے استفسار کیا کہ 5 کروڑ روپے کی بکتر بند گاڑیاں 17 کروڑ روپے میں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

19-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان