سینیٹ قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ نے پاک چین اقتصادی راہداری کے نقشے میں روٹ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

سینیٹ قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ نے پاک چین اقتصادی راہداری کے نقشے میں روٹ کی تبدیلی کو یکسر مسترد کردیا،اصل نقشے پرکام کیا جائے ورنہ روٹس کوخیبر پختونخواہ سے بھی نہیں گزرنے دیا جائے گا،حاجی عدیل

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 14فروری۔2015ء) سینیٹ کی اسٹینڈنگ کمیٹی برائے امور خارجہ کے ممبران نے پاک چین اقتصادی راہداری کے نقشے میں روٹ کی تبدیلی کو یکسر مسترد کردیا اور کہا کہ اصل نقشے پرکام کیا جائے ورنہ روٹس کوخیبر پختونخواہ سے بھی نہیں گزرنے دیا جائے گا۔ جمعہ کے روز سینیٹ اسٹیڈنگ کمیٹی برائے امور خارجہ کا اجلاس چیئرمین حاجی عدیل کی زیرصدارت ہوئی جس میں اقتصادی امور کے ہوالے سے پاک چین اقتصادی راہداری میں روٹس کی تبدیلی پر شدید اظہار برہمی کیا گیا ۔

سینیٹر حاجی عدیل نے کمیٹی کو اصل نقشہ دکھاتے ہوئے بتایا کہ خضدار میں روٹ شمال میں خیبرپختونخواہ کی طرف جانے کی بجائے روٹ تبدیل کرکے پنجاب کے علاقوں سے گزار کرلاہور گزارا جارہاہے سینیٹر فرحت الله بابر نے کہا کہ حکومت ایک طرف دہشت گردی کا خاتمہ کرنا چاہتی ہے تو دوسری طرف خیبرپختونخواہ سمیت فاٹا اور بلوچستان میں ترقیاتی کاموں کو کیوں نظر انداز کررہی ہے حکومت کو چاہیے کہ وہ پہلے والے اصل نقشے پر عملدرآمد کرے جبکہ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

14-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان