شمالی وزیرستان ہماری اپنی سرزمین ہے دہشتگردوں کا خاتمہ کرکے اپنے شہریوں کو تحفظ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
تاریخ اشاعت: 2015-02-14
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

شمالی وزیرستان ہماری اپنی سرزمین ہے دہشتگردوں کا خاتمہ کرکے اپنے شہریوں کو تحفظ دینگے،حکومت ، مولوی فضل اللہ کے حوالے سے افغانستان سے رابطہ میں ہیں، دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کا بہتر نتیجہ آئے گا ، خرم دستگیر کا قومی اسمبلی میں اظہا ر خیال

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 14فروری۔2015ء) حکومت نے ایوان میں کہاہے کہ شمالی وزیرستان ہماری اپنی سرزمین ہے دہشتگردوں کا خاتمہ کرکے اپنے شہریوں کو تحفظ دینگے، مو لوی فضل اللہ کے حوالے سے افغانستان سے رابطہ میں ہیں، دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کا بہتر نتیجہ آئے گا ۔ جمعہ کے روزقومی اسمبلیمیں وقفہ سوالات کے دوران وزیر تجارت خرم دستگیر نے کہاہے کہ مولوی فضل اللہ کے حوالے سے افغانستان سے رابطہ میں ہیں، دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کا بہتر نتیجہ آئے گا ، وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ نے کہاہے کہ پاکستانی ورلڈ کپ میں بہترین کھیل کا مظاہرہ کرینگے، بھارتی یونس خان کوٹرنک کارڈ سمجھتے ہیں جبکہ مصباح الحق ، ناصر جمشید ہماری امید ہیں جبکہ ڈپٹی سپیکر ان فٹ ہونیوالے کھلاڑیوں کو فٹ قرار دے کر ورلڈ کپ کھیلنے کیلئے بھجوانے کا نوٹس لیتے ہوئے کہاکہ اس معاملے کی وزارت نوٹس لیتے ہوئے تحقیقا ت کرے۔

۔ متحدہ قومی موومنٹ کے رکن قومی اسمبلی اقبال محمد علی خان کے سوال کے جواب میں وفاقی وزیر میاں ریاض حسین پیرزادہ نے کہا کہ جب سے وزارت کھیل صوبوں کو منتقل ہوئی ہے اس لئے کھیلوں اور انفراسٹرکچر کی تعمیر کی ذمہ داری صوبوں کی ہے، وفاقی دارالحکومت کے علاقے میں کھیلوں کے فروغ کے لئے آئی پی سی نگرانی کا کام کرتا ہے، سوات میں بد امنی کی وجہ سے کام رکا ہوا تھا، قائمہ کمیٹی کی ہدایت پر سوات اور مالم جبہ میں کھیلوں کے انفراسٹرکچر کی تعمیر کے لئے مختص فنڈز بروئے کار لائے جا رہے ہیں۔

شاہدہ رحمانی کے سوال کے جواب میں وزیر خارجہ امور کی جانب سے وفاقی وزیر انجینئر خرم دستگیر نے بتایا کہ پاکستان جنیوا کنونشن کا حصہ ہے، جہاں متحارب ریاستیں آپس میں لڑ رہی ہوں وہاں انسانی حقوق کے حوالے سے جنیوا کنونشن پر عملدرآمد ضروری ہے، شمالی وزیرستان ہماری اپنی سرزمین ہے، ہمیں اپنے شہریوں کو بھی تحفظ دینا ہے اور دہشت گردوں سے بھی لڑنا ہے۔ بیلم حسنین کے سوال کے جواب میں وزیر تجارت انجینئر خرم دستگیر نے بتایا کہ گزشتہ پانچ سالوں کے دوران پاکستان نے صرف انڈونیشیاء کے ساتھ آزادانہ تجارت کا معاہدہ کیا ہے جس کے بعد کینو کی برآمد ایک کروڑ 92 لاکھ 20 ہزار ڈالر سے تجاوز کر گئی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ چین کے ساتھ آزادانہ تجارت کا معاہدہ 2006ء میں ہوا تھا اس کے بعد

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

14-02-2015 :تاریخ اشاعت