پی اے سی نے نیسپاک کی ساڑھے سات ارب روپے کی مالی بدعنوانیوں کا کھوج لگا لیا، نیسپاک ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات فروری

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
تاریخ اشاعت: 2015-02-12
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

تلاش کیجئے

پی اے سی نے نیسپاک کی ساڑھے سات ارب روپے کی مالی بدعنوانیوں کا کھوج لگا لیا، نیسپاک افسران کو ساتھیوں کی کرپشن بچانے کی بجائے قومی مفادات کے دفاع کی ہدایت، نیسپاک بیورو کریسی کے گاڑیوں کو کرایہ پر حاصل کرکے بیس کروڑ سے زائد اڑا دینے پر پی اے سی کا اظہارافسوس ،ایم ڈی نے ادارہ کے اصل اثاثے پی اے سی سے چھپا لئے، سیکرٹری پانی و بجلی نے اگلے اجلاس میں مکمل تفصیلات دینے کا وعدہ کرلیا

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 12فروری۔2015ء) پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی)نے وزارت پانی و بجلی کے ذیلی ادارہ نیسپاک کی ساڑھے سات ارب روپے کی مالی بدعنوانیوں کا کھوج لگا لیا ہے اور ہدایت کی ہے کہ نیسپاک کے افسران ساتھی بھائیوں کی کرپشن بچانے کی بجائے قومی مفادات کا دفاع کریں جبکہ نیسپاک بیورو کریسی کے گاڑیوں کو کرایہ پر حاصل کرکے بیس کروڑ سے زائد اڑا دینے پر پی اے سی کا اظہارافسوس ، نیسپاک کے ایم ڈی نے ادارہ کے اصل اثاثے پی اے سی سے چھپا لئے، سیکرٹری پانی و بجلی نے اگلے اجلاس میں مکمل تفصیلات دینے کا وعدہ کرلیا۔

پی اے سی کا اجلاس سید خورشید شاہ کی صدارت میں ہوا اجلاس میں نیسپاک کے مالی سال 2010-11ء کے مالی حسابات پر معترض پیراؤں پر غور کیا گیا ۔ اجلاس میں چوہدری پرویز الٰہی ، شیخ رشید ، عاشق گوپانگ ، شیخ روحیل اصغر ، عذرا پیچوہو اور صاحبزادہ نذیر سلطان نے بھی شرکت کی ۔ پی اے سی نے حکم دیا کہ نیسپاک ایرا سے ڈیڑھ ارب جلد وصول کرے نیسپاک نے کنسلٹنسی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان