فرانس، پیدائش کے وقت تبدیل ہونیوالی بچیاں 20 سال بعد اپنے اصل والدین کو مل گئیں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ فروری

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
تاریخ اشاعت: 2015-02-11
-

تلاش کیجئے

فرانس، پیدائش کے وقت تبدیل ہونیوالی بچیاں 20 سال بعد اپنے اصل والدین کو مل گئیں ،عدالت کا نجی ہسپتال اسپتال انتظامیہ کو دونوں خاندانوں کو 18لاکھ 80 ہزار یورو ادا کرنے کا حکم

پیرس(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔ 11فروری۔2015ء ) فرانس میں پیدائش کے وقت تبدیل ہونے والی بچیاں 20 سال بعد اپنے اصل والدین کو مل گئیں جب کہ عدالت نے اسپتال کے عملے کی غفلت پر اسپتال کو متعلقہ والدین کو 18 لاکھ یورو ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق فرانس کے شہر کانز میں خاتون صوفیہ سیرینو نے 4 جولائی 1994 کو بیٹی کو جنم دیا، پیدائش کے وقت یرقان ہونے کی وجہ سے بچی کو انتہائی نگہداشت کے وارڈ میں منتقل کردیا گیا، جہاں صرف ایک ہی انکوبیٹر خالی تھا،عین اسی وقت اسی وارڈ میں اسی عمر کی ایک اور بچی لائی گئی، کچھ دیر بعد وہاں تعینات نرس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11-02-2015 :تاریخ اشاعت