پاکستان سمیت دنیا بھر میں یو م یکجہتی کشمیر بھرپور انداز میں منایا گیا،وزیر اعظم ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-06
تاریخ اشاعت: 2015-02-06
تاریخ اشاعت: 2015-02-06
تاریخ اشاعت: 2015-02-06
تاریخ اشاعت: 2015-02-06
تاریخ اشاعت: 2015-02-06
پچھلی خبریں -

مظفر آباد

مظفر آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:12 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:12 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:13 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:14 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:16 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 14:53:19 مظفر آباد کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

پاکستان سمیت دنیا بھر میں یو م یکجہتی کشمیر بھرپور انداز میں منایا گیا،وزیر اعظم نواز شریف کی آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی کے اجلا س میں شرکت و خطاب، ملک بھر میں عام تعطیل ، سیاسی و سماجی جماعتوں کی جانب سے ریلیاں نکالی گئیں،انسانی ہاتھوں کی زنجیریں بنا کر مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا گیا، مسئلہ کشمیر کا آزادانہ اور استصواب رائے کے علاوہ اور کوئی حل نہیں ،نوازشریف،ہم نے ہمیشہ بامقصد مذاکرات پر زوردیا ہے جبکہ بھارت تاخیری حربے استعمال کر رہا ہے، پوری دنیا پر واضح کردینا چاہتا ہوں کہ جنوبی ایشیاء میں دیرپا امن کا قیام مسئلہ کشمیر کے حل سے مشروط ہے، جب تک کشمیریوں کا حق خودارادیت تسلیم نہیں کیا جاتا پاکستان ان کی اخلاقی‘ سیاسی اور سفارتی امداد جاری رکھے گا، شہیدوں کا خون رائیگاں نہیں جائے گا اور آزادی کا سورج ضرور طلوع ہوگااورآئندہ نسلیں آزادی کا سانس لیں گی‘کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے،کوئی جدا نہیں کر سکتا،وزیراعظم کا آزاد کشمیر قانون ساز اسمبلی اور آزادکشمیر کونسل کے مشترکہ اجلاس سے خطاب

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔6فروری۔2015ء ) سڑسٹھ سال سے کشمیری عوام بھارتی ظلم و جبر اور بربریت کی عملی تصویر بنے ہوئے ہیں ، عظیم قربانیوں کو خراج تحسین پیش کرنے کیلئے پاکستان سمیت دنیا بھر میں یو م یکجہتی کشمیر منایا گیا ۔ ملک بھر میں جلسے جلوس اور ریلیاں نکالی گئیں ۔ مقبوضہ کشمیر میں غاصب بھارتی فوج کے ظلم و تشدد کا سامنا کرنے والے کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے اہل پاکستان نے یکجہتی کشمیرمنایا ۔

ملک بھر میں عام تعطیل کی گئی ۔ تمام چھوٹے بڑے شہروں میں ریلیاں نکالی گئیں ، انسانی ہاتھوں کی زنجیریں بنا کر مظلوم کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا گیا ۔ انیس سو نوے میں کشمیر میں تحریک آزادی عروج پر پہنچی تو قابض بھارتی فوج کے ظلم کے نئے دور کا بھی آغاز ہوگیا۔ دو دہائیوں سے زائد عرصے میں لاکھوں کشمیری شہید ہوئے ، گھر اجڑے ، عصمتیں لٹیں ، بچے یتیم ہوئے اورقربانیوں کی ایک نئی تاریخ رقم ہوئی۔

اہل پاکستان ہر لمحہ ، ہر قدم اہل کشمیر کے شانہ بشانہ کھڑے رہے۔ پانچ فروری کو یوم کشمیر منانے کا مقصد اقوام عالم کے ضمیر کو جھنجوڑنا ہے ، اس کے ساتھ کشمیری عوام کو یہ پیغام بھی دینا ہے کہ جدوجہد آزادی میں وہ تنہا نہیں پوری پاکستانی قوم ان کے ساتھ کھڑی ہے وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر آزاد کشمیر قانون اسمبلی میں شرکت کی اور قانون ساز اسمبلی میں خطا ب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر کے ساتھ ہمارا دلی تعلق ہے جسے نبھائیں گے پاکستانیوں کے دل کشمیر ی عوام کے ساتھ دھڑکتے ہیں کشمیریوں اور پاکستانیوں کا صدیوں سے ساتھ ہے جو جدا نہیں ہو سکتا کشمیر پاکستان کی شہہ رگ ہے پوری قوم مسئلہ کشمیر کا حل چاہتی ہے طاقت کے زور پر کشمیریوں کو دبایا نہیں جا سکا پاکستان مسئلہ کشمیر کے بغیر بھارت کے ساتھ کسی بھی مذاکراتی ایجنڈے پر یقین نہیں رکھتے انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ اور عالمی برادری کشمیری عوام کے مصائب کے خاتمے کیلیے کردار ادا کریں،مسئلہ کشمیر کے حل سے ہی جنوبی ایشیا میں پائیدار امن ممکن ہے۔

وزیر اعظم نواز شریف نے اپنے پیغام میں کہا کہ پاکستان کے عوام حق خود ارادیت کی جدو جہد میں کشمیریوں کی غیر متزلزل حمایت جاری رکھیں گے۔جموں و کشمیر کے بے گناہ عوام بھارتی سیکورٹی فورسز کے 7 لاکھ اہلکاروں کے ہاتھوں انسانی حقوق کی بد ترین خلاف ورزیوں کا نشانہ بن رہے ہیں،تنازعہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کی روشنی میں منصفانہ اور پر امن انداز میں حل کیا جائے۔ادھروزیراعظم محمد نوازشریف نے آزاد کشمیر کیلئے مختلف ترقیاتی منصوبوں کا اعلان کرتے ہوئے واضح طور پر کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر کا آزادانہ اور استصواب رائے کے علاوہ اور کوئی حل نہیں ہے،ہم نے ہمیشہ بامقصد مذاکرات پر زوردیا ہے جبکہ بھارت تاخیری حربے استعمال کر رہا ہے، پوری دنیا پر واضح کردینا چاہتا ہوں کہ جنوبی ایشیاء میں دیرپا امن کا قیام مسئلہ کشمیر کے حل سے مشروط ہے، جب تک کشمیریوں کا حق خودارادیت تسلیم نہیں کیا جاتا پاکستان ان کی اخلاقی‘ سیاسی اور سفارتی امداد جاری رکھے گا۔

شہیدوں کا خون رائیگاں نہیں جائے گا اور آزادی کا سورج ضرور طلوع ہوگااورآئندہ نسلیں آزادی کا سانس لیں گی۔کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اور پاکستانیوں کے دل کشمیریوں کے ساتھ دھڑکتے ہیں،دنیا کی کوئی طاقت ہمیں ایک دوسرے سے جدا نہیں کر سکتی ،جمعرات کویہاں آزادجموں کشمیر کی قانون ساز اسمبلی اور آزادکشمیر کونسل کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ کشمیر کو شامل کئے بغیر مذاکرات کے کسی ایجنڈے کو مکمل نہیں سمجھتے اور پاکستان کشمیر کی آزادی کے لئے سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھے گا۔

طاقت کے زور پرکشمیریوں کی جدوجہد کو دبایا نہیں جا سکتا،کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اس لئے کشمیر کے ساتھ اپنے تعلق اور رشتے کو نبھائیں گے،آزاد کشمیر کیساتھ میرا دلی و قلبی تعلق اور رشتہ ہے‘ پاکستانی عوام کے دل کشمیریوں کیساتھ دھڑکتے ہیں۔ دنیا کی کوئی طاقت کشمیریوں کو ہم سے الگ نہیں کرسکتی۔ کشمیریوں کیساتھ رشتہ ضرور نبھائیں گے۔ قوم کشمیری کے مسئلے کا حل چاہتی ہے۔ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے۔

خواہش ہے کہ آزاد کشمیر بھی پاکستان کی طرح ترقی کی راہ پر رواں دواں ہو۔ کشمیر میں جاری ترقیاتی کام جلداز جلد مکمل کرنا چاہتے ہیں۔ کشمیریوں کیساتھ صدیوں سے تعلق ہے۔ نیلم جہلم منصوبہ بروقت مکمل ہوگا۔کشمیر کی آزادی اور حق خود ارادیت کی بھرپور حمایت کرتے ہیں، بھارت مسئلہ کشمیر پر ہمیشہ تاخیری حربے استعمال کرتا ہے، کشمیر اور پاکستان کا صدیوں کا ساتھ ہے کوئی ہمیں جدا نہیں کرسکتا جب کہ کشمیروں کو خوف زدہ کرنے کے لئے وادی میں 7 لاکھ مسلح فوجی تعینات کئے گئے لیکن اس کے باوجود کشمیری عوام کے جذبے متذلزل نہیں ہوئے ،خطے میں دیرپا امن کا قیام مسئلہ کشمیر کو حل کئے بغیر ناممکن ہے اورکشمیرکو شامل کئے بغیر پاکستان مذاکرات کے کسی ایجنڈے کو مکمل نہیں سمجھتا اورایک بار پھر موقف کو دہراتا ہوں کہ کشمیری عوام کی خواہشات کے برعکس کوئی فیصلہ نہیں کیا جائے گا اور جنوبی ایشیا میں دیرپا امن کا قیام مسئلہ کشمیر سے مشروط ہے۔

نواز شریف نے کہا کہ میرا آزاد و جموں کشمیر کے ساتھ دلی تعلق ہے ،میرا آج سے نہیں بلکہ بہت پرانا اور بچپن سے تعلق ہے ،پاکستان کا بھی آزاد اور مقبوضہ جموں وکشمیر کے ساتھ گہرا تعلق ہے ،پاکستانیوں کے دل کشمیریوں کے ساتھ دھڑکتے ہیں،کشمیریوں کے ساتھ رشتہ نبھائیں گے،مسئلہ کشمیر پوری قوم کا مسئلہ ہے اور پوری قوم اس مسئلے کا حل چاہتی ہے ،آج میں کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کے لئے یہاں حاضر ہوا ہوں۔

وزیر اعظم نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اور پاکستانیوں کے دل کشمیریوں کے ساتھ دھڑکتے ہیں،تاریخی اور جغرافیائی اعتبار سے کشمیر اور پاکستان قدرتی طور پر ایک جان اور دوقالب

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

06-02-2015 :تاریخ اشاعت