یم کورٹ میں آمدن سے زائد اثاثہ جات رکھنے اور ٹیکس ریٹرن جمع نہ کروانے پر آرمی افسر ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل فروری

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
پچھلی خبریں -

اسلام آباد

تلاش کیجئے

یم کورٹ میں آمدن سے زائد اثاثہ جات رکھنے اور ٹیکس ریٹرن جمع نہ کروانے پر آرمی افسر لیفٹیننٹ کرنل منیر گل کے کورٹ مارشل سے متعلق عدالتی فیصلے کیخلاف دائر وزارت دفاع کی نظر ثانی کی درخواست سماعت کیلئے منظور ،مقدمہ کو تین رکنی بینچ کے روبرو لگانے کا حکم ، عدالت فوجی عدالتوں کے سیکشن 55 کے دائرہ کار کے تعین کیلئے اس مقدمے کی تفصیل سے سماعت کرے گی ،جسٹس جواد ایس خواجہ

اسلام آباد( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔3فروری۔2015ء) سپریم کورٹ نے آمدن سے زائد اثاثہ جات رکھنے اور ٹیکس ریٹرن جمع نہ کروانے پر آرمی افسر لیفٹیننٹ کرنل منیر گل کے کورٹ مارشل سے متعلق عدالتی فیصلے کیخلاف دائر وزارت دفاع کی نظر ثانی کی درخواست سماعت کیلئے منظور کرلی ۔ مقدمہ کو تین رکنی بینچ کے روبرو لگانے کا حکم ۔ جسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس دیئے ہیں کہ عدالت فوجی عدالتوں کے سیکشن 55 کے دائرہ کار کے تعین کیلئے اس مقدمے کی تفصیل سے سماعت کرے گی ۔

پیر کے روز جسٹس جواد ایس خواجہ کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی اس دوران وزارت دفاع کی جانب سے ڈپٹی اٹارنی جنرل نے لیفٹیننٹ کرنل منیر گل کے کورٹ مارشل کے حوالے سے سپریم کورٹ کے فیصلے پر نظر ثانی کی استدعا کی اور کہا کہ فیصلے پر نظر ثانی کی جائے جس پر جسٹس جواد ایس خواجہ نے کہا کہ اس کیس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

03-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان