ملک میں غیرت کے نام پر جاری قتل عام کے قوانین میں ترامیم بل بارے سینٹ قائمہ کمیٹی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل فروری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
تاریخ اشاعت: 2015-02-03
- مزید خبریں

اسلام آباد

تلاش کیجئے

ملک میں غیرت کے نام پر جاری قتل عام کے قوانین میں ترامیم بل بارے سینٹ قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کی رپورٹ ایوان بالامیں پیش ، بل کے تحت ملک میں غیرت کے نام پر قتل کے ملزمان کو معافی نہیں مل سکے گی،اس جرم کو ناقابل معافی بنانے کے لئے قانون میں ترمیم کی جائے گی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔3فروری۔2015ء) سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کے چیئرمین سینیٹر طلحہ محمود نے ملک میں غیرت کے نام پر جاری قتل عام کے قوانین میں ترامیم بل بارے کمیٹی کی رپورٹ ایوان میں پیش کی ۔ کمیٹی پہلے ہی اس بل کو متفقہ طور پر منظور کرچکی ہے ۔ یہ بل سینیٹر سیدہ صغریٰ امام نے پیش کیا تھا اس بل کے تحت ملک میں غیرت کے نام پر قتل کے ملزمان کو معافی نہیں مل سکے گی اور اس جرم کو ناقابل معافی بنانے کے لئے قانون میں ترمیم کی جائے گی ۔

سینیٹر طلحہ محمود نے شہریوں پر بے جا تشدد اور زیر حراست ہلاکتوں اور زیر حراست زنا بالجبر بارے قانون میں ترامیم کے لئے کمیٹی کی رپورٹ پیش کی ان قوانین میں ترامیمی بل بھی پاکستان پیپلز پارٹی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

03-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان