کرپٹ عدالتی نظام سے پریشان افغانیوں کا انصاف کیلئے طالبان سے رجوع، جتنی تعداد ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر فروری

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
تاریخ اشاعت: 2015-02-02
-

تلاش کیجئے

کرپٹ عدالتی نظام سے پریشان افغانیوں کا انصاف کیلئے طالبان سے رجوع، جتنی تعداد طالبان قاضیوں کے پاس ہوتی ہے عدالتوں میں بھی نظر نہیں آتی‘افغان شہری

نیویارک(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔2فروری۔2015ء)افغانستان میں کرپٹ عدالتی نظام اور فیصلوں میں تاخیر کا فائدہ طالبان کو ہونے لگا۔ لوگ فوری فیصلوں اور ان پر عمل درآمد یقینی بنانے کیلیے طالبان منصفوں کی طرف رخ کررہے ہیں۔ امریکی اخبار کے مطابق امریکا کی جانب سے خاص توجہ اور بھاری سرمایہ خرچ کرنے کے باوجود افغانستان کا عدالتی نظام لوگوں کو فوری سستا انصاف فراہم کرنے میں ناکام ہے۔ افغان عوام مغرب سے اخذ کردہ قوانین اور حکومتی نظام انصاف پر اعتماد نہیں کرتے اور اسے کرپٹ گردانتے ہیں۔

دور دراز علاقوں میں تو جوحال ہے سو ہے ، دارالحکومت کابل میں بھی لوگوں کا خیال ہے کہ اگر کوئی شخص ایک فارم کا فیصلہ کرا نا چاہے تو اسے بھاری فیسوں اور رشوت کے لیے پہلے فارم میں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

02-02-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان