ٹریننگ جاری رکھی ہوئی تھی اور ایک ماہ کے اندر عالمی کرکٹ میں پاکستان کی نمائندگی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ جنوری

مزید کھیلوں کی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-30
تاریخ اشاعت: 2015-01-30
تاریخ اشاعت: 2015-01-30
تاریخ اشاعت: 2015-01-30
-

لاہور

تلاش کیجئے

ٹریننگ جاری رکھی ہوئی تھی اور ایک ماہ کے اندر عالمی کرکٹ میں پاکستان کی نمائندگی کر سکتا ہوں، محمد عامر کا دعویٰ ، میں غیر رجسٹرڈ اور چھوٹے موٹے کلب کے میچز کھیلتا رہا ہوں لہٰذا میری جسمانی فٹنس بہترین ہے ،جب میں کھیل رہا تھا تو اس وقت بھی لوگ تنقید کرتے تھے اور ان بھی کریں گے لہٰذا ایسے لوگ ہوتے ہیں جو تنقید کرتے ہیں، پریس کانفرنس

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔30جنوری۔2015ء ) فاسٹ باوٴلر محمد عامر نے کہا ہے کہ میں نے ٹریننگ جاری رکھی ہوئی تھی اور ایک ماہ کے اندر عالمی کرکٹ میں پاکستان کی نمائندگی کر سکتا ہوں۔لاہور میں اپنی رہائش گاہ پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں غیر رجسٹرڈ اور چھوٹے موٹے کلب کے میچز کھیلتا رہا ہوں لہٰذا میری جسمانی فٹنس بہترین ہے اور مجھے زیادہ سے زیادہ پاکستان کی نمائندگی کے لیے ایک سے ڈیڑھ ماہ کا عرصہ لگے گا۔

سابق کھلاڑیوں کی جانب سے کرکٹ میں واپسی پر کی جانے والی تنقید کے حوالے سے سوال پر فاسٹ باوٴلر نے کہا کہ جب میں کھیل رہا تھا تو اس وقت بھی لوگ تنقید کرتے تھے اور ان بھی کریں گے لہٰذا ایسے لوگ ہوتے ہیں جو تنقید کرتے ہیں۔’مجھے اپنی کارکردگی اور فٹنس پر توجہ مرکوز رکھنی ہے، کون کیا کہہ رہا ہے یہ اس کا ذاتی فعل ہے، ا?خر میں منجھے اپنی کارکردگی کو دیکھنا ہے‘۔انہوں نے کہا کہ متعدد کھلاڑی ایسے بھی جو یہ کہہ رہے ہیں کہ عامر کو کھیلنا چاہیے، ان میں شین واٹسن، مائیکل ایتھرٹن، مائیکل ہولڈنگ، عمران خان، وسیم اکرم، شعیب اختر اور سارو گنگولی ہیں۔



اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

30-01-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان