فاٹا کی تعمیر نو کیلئے جامع پالیسی کی ضرورت ہے،آرمی چیف، مکمل امن کے قیام تک ان ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
تاریخ اشاعت: 2015-01-28
پچھلی خبریں -

مہمند ایجنسی

تلاش کیجئے

فاٹا کی تعمیر نو کیلئے جامع پالیسی کی ضرورت ہے،آرمی چیف، مکمل امن کے قیام تک ان علاقوں کو چھوڑا نہیں جائے گا،قبائلی علاقوں میں معمول کی زندگی بحال ہونے تک فوج اپنا مشن جاری رکھے گی،جنرل راحیل شریف کی مہمند ایجنسی کے دورے کے دوران جوانوں سے بات چیت

مہمند ایجنسی(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔28جنوری۔2015ء)آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ فاٹا کی تعمیر نو کیلئے جامع پالیسی کی ضرورت ہے مکمل امن کے قیام تک ان علاقوں کو چھوڑا نہیں جائے گا،قبائلی علاقوں میں معمول کی زندگی بحال ہونے تک فوج اپنا مشن جاری رکھے گی۔وہ منگل کو مہمند ایجنسی کے دورے کے دوران جوانوں سے بات چیت کررہے تھے۔اس موقع پر آرمی چیف کو جاری آپریشن امن واستحکام اور ترقیاتی کاموں پر بریفنگ دی گئی،آرمی چیف نے جوانوں کی قربانیوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ فاٹا کی تعمیر نو کیلئے جامع پالیسی کی ضرورت ہے مکمل امن کے قیام تک ان علاقوں کو چھوڑا نہیں جائے گا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے دورہ چین سے واپسی کے بعد مہمند ایجنسی کا دورہ کیا جہاں پر انہوں نے آپریشن ضرب عضب کا جائزہ لیا اور افسروں اور جوانوں سے ملاقاتیں کیں۔آرمی چیف کو اس موقع پر مہمند ایجنسی میں جاری آپریشن،امن واستحکام اور جاری ترقیاتی کاموں کے حوالے سے بریفنگ دی گئی،اس موقع پر آرمی چیف نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں جوانوں کے عزم اور حوصلے کو سراہا اور امن کے قیام کیلئے افسروں اور جوانوں کی تعریف کی،ان کا کہنا تھا کہ پورے فاٹا میں امن کیلئے جامع اور مربوط پالیسی پر عمل ضروری ہے،پورے فاٹا کو دہشتگردوں سے خالی کرایا جائے گا،فاٹا میں تعمیر نو اوربحالی کے لئے جامع منصوبہ وقت کی ضرورت ہے۔

ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل سے دہشتگردی کو جڑ سے اکھاڑنے میں مدد ملے گی۔انہوں نے کہا کہ قبائلیوں نے اپنے علاقے سے دہشتگردوں کو نکالنے میں اہم کردار ادا کیا،قبائلی علاقوں میں معمول کی زندگی بحال ہونے تک فوج اپنا مشن جاری رکھے گی۔انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل کو تعلیم اور اقتصادی مواقع کی فراہمی سے دہشتگردی کا خاتمہ ہوگا۔انہوں نے کہا کہ باجوڑ اور مہمند ایجنسی کے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

28-01-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان