افغانستان پاکستان کے بارڈر کو تسلیم نہیں کرتا، لیفٹیننٹ جنرل ناصرجنجوعہ،جب بھی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
تاریخ اشاعت: 2015-01-27
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کوئٹہ

کوئٹہ شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 21/01/2017 - 00:00:15 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 00:00:16 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:30:47 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:30:57 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 16:54:19 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 17:17:03 کوئٹہ کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

افغانستان پاکستان کے بارڈر کو تسلیم نہیں کرتا، لیفٹیننٹ جنرل ناصرجنجوعہ،جب بھی بارڈر کو محفوظ بنانے کیلئے خاردار تار، دیوار کی تعمیر اوربائیو میٹرک سسٹم لگانے کیلئے اقدامات اٹھائے جاتے ہیں افغانستان کی حکومت کی طر ف سے ناراضگی سامنے آجاتی ہے یورپی منڈیوں میں منشیات کی غیر قانونی مانگ سے زیادہ افغانستان میں منشیات اس سال کاشت کی گئی ہے جس کی تر سیل کیلئے پاکستان متوقع روٹ کے طور پر استعما ل ہوگا ہم سب نے ملکر اس روٹ کو استعمال ہونے سے روکنا ہے گڈ گورنس کو یقینی بنانے کیلئے سب اداروں کو ہاتھوں میں ہاتھ اور کندھے سے کندھا ملا کر آپس کے اختلافات بالاے طاق رکھتے ہوئے کام کرنا ہوگا،کمانڈر سدرن کمانڈ کا تقریب سے خطاب

کوئٹہ ( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔27جنوری۔2015ء) کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل ناصرجنجوعہ نے کہا ہے کہ افغانستان پاکستان کے بارڈر کو تسلیم نہیں کرتا جب بھی بارڈر کو محفوظ بنانے کیلئے خاردار تار، دیوار کی تعمیر اوربائیو میٹرک سسٹم لگانے کیلئے اقدامات اٹھائے جاتے ہیں دوسری جانب افغانستان کی حکومت کی طر ف سے ناراضگی سامنے آجاتی ہے یورپی منڈیوں میں منشیات کی غیر قانونی مانگ سے زیادہ افغانستان میں منشیات اس سال کاشت کی گئی ہے جس کی تر سیل کیلئے پاکستان متوقع روٹ کے طور پر استعما ل ہوگا ہم سب نے ملکر اس روٹ کو استعمال ہونے سے روکنا ہے گڈ گورنس کو یقینی بنانے کیلئے سب اداروں کو ہاتھوں میں ہاتھ اور کندھے سے کندھا ملا کر آپس کے اختلافات بالاے طاق رکھتے ہوئے کام کرنا ہوگا ان خیالات کا اظہار انہوں نے کسٹم کے عالمی دن کے موقع پر کسٹم کی جانب سے پکڑی جانیوالی منشیات اور غیر ممنوعہ چیزوں کو تلف کرنے کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر ماڈل کلکٹریٹ کسٹم کوئٹہ کے کلکٹرظہور اخترراجہ ، ڈپٹی کلکٹر ڈاکٹر عامر نواز حامد ، انسپکٹر جنر ل فرنٹےئر کور بلوچستان میجر جنرل اعجاز شاہد ، سیکر ٹر ی داخلہ کیپٹن ( ر) اکبر حسین درانی ،کمشنر کوئٹہ ڈویثرن کمبر دشتی ، ڈائریکٹر جنرل نائب سید خالد اقبال ،ڈائریکٹر کسٹم انٹیلی جنس محمد اقبال بھوانہ، اسسٹنٹ ڈائریکٹر کسٹم انٹیلی جنس انعام اللہ وزیر،اسسٹنٹ کلکٹر کسٹم پریوینٹو حامد قمبرانی ، کمانڈنٹ غزہ بند اسکاؤٹ کرنل سجاد، ایڈیشنل آئی جی پولیس احسن محبوب سی سی پی او کوئٹہ عبدالرزاق چیمہ سمیت کسٹم کے آفیسران دیگر محکموں کے افسران بھی موجود تھے کمانڈر سدرن کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل ناصر جنجوعہ نے کہا کسٹم کے آفیسران نے عملے کے ساتھ ملکر بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنے ٹارگٹ سے زائد حاصل کرکے قومی خزانے کو فائدہ پہنچایا ہے جسکا کریڈٹ نا صرف افسران بلکہ ادارے کے تمام ملازمین کو جاتا ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان کے اپنے ہمسایہ ممالک کے ساتھ ملنے والے بارڈر مختلف مقامات سے غیر محفوظ ہیں انہوں نے کہا کہ افغانستان ہمارے درمیان انٹرنیشنل بارڈر کو اس طریقے سے تسلیم نہیں کرتا ہم ڈیورنڈ لائن کو محفوظ بنانے کیلئے خاردار تار یا دیوار بنانے کے ساتھ ساتھ بائیو میٹرک سسٹم نصب کرنا چاہتے ہیں تو دوسری جانب سے مزاحمت کی جاتی ہے کیونکہ بلوچستان میں 12سو کلو میٹر کا بارڈر محفوظ بنانے کی جب بھی کوشش کی گئی تو اس میں ہمسایہ ملک سے مزاحمت کی گئی کیونکہ ڈیورنڈ لائن پر آباد گاؤں اور رہائش پزیر لوگوں کی دونوں جانب رشتہ داریاں ہیں اور وہ دونوں اطراف آتے جاتے ہیں انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے ساتھ افغانستان کے ملنے والے بارڈر پر ایک ہی مستقل آنے جانے کا راستہ چمن بارڈر پر واقع ہے جبکہ 3سو سے زائد غیر محفوظ راستے ہیں جہاں سے لوگ بلا روک ٹوک آتے جاتے ہیں اور اس سرحدی علاقے میں ڈیڑ ھ سو کلو میٹر سے زائدرفتار سے گاڑی چلائی جاسکتی ہے انہوں نے کہا کہ جس گھر کی چار دیواری نہ ہو وہاں پر بسنے والوں کو اپنی حفاظت کیلئے اقدامات کرنے پڑتے ہیں ایران سے ملنے والا بارڈر بھی غیر محفوظ ہے جہاں سے ایرانی ڈیزل سمیت دیگر سامان

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

27-01-2015 :تاریخ اشاعت