نابینا افراد پر تشدد کے بعد لاہور پولیس نے سکول کے معصوم بچوں پر بھی لاٹھی چارج ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ جنوری

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-23
تاریخ اشاعت: 2015-01-23
تاریخ اشاعت: 2015-01-23
تاریخ اشاعت: 2015-01-23
تاریخ اشاعت: 2015-01-23
تاریخ اشاعت: 2015-01-23
پچھلی خبریں -

لاہور

تلاش کیجئے

نابینا افراد پر تشدد کے بعد لاہور پولیس نے سکول کے معصوم بچوں پر بھی لاٹھی چارج ، 13سالہ زخمی طالبعلم کو ہسپتال منتقل ،وزیر اعلیٰ کا واقعے کا فوری طور پر نوٹس لیکر تحقیقات کا حکم

لاہور ( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔23جنوری۔2015ء) نابینا افراد پر تشدد کے بعد لاہور پولیس نے سکول کے معصوم بچوں پر بھی لاٹھی چارج کرڈالا جس کے بعد ایک 13سالہ زخمی طالبعلم کو ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے تاہم وزیر اعلیٰ نے اس واقعے کا فوری طور پر نوٹس لیکر تحقیقات کا حکم دیدیا ہے اور ڈی آئی جی آپریشن نے تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دیدی ہے جبکہ پولیس نے بچے کے والد سے تشدد نہ کیے جانے کا بیان لکھوا لیا ہے ،۔

تفصیلات کے مطابق بھاٹی گیٹ کے علاقہ مین واقع اسلامیہ ہائی سکول کو حکومت کی جانب سے غازی فاؤنڈیشن کی سرپرستی سے ہٹا کر محکمہ تعلیم کی سرپرستی میں دے دیا گیا تھا جس پر گزشتہ روز سکول کے معصوم بچوں اور ان کی ماؤں نے سکول کے باہر پر امن طور پر احتجاج کیا ۔مظاہرین نے پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جس میں فیصلہ واپس لینے اور انہیں سکیورٹی فراہم کرنے کا مطالبہ تھا۔اتنے میں پولیس کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر پہنچ گئی اور مظاہرین سے مذاکرات کی بجائے ان پر لاٹھی چارج کر دیا ۔

مظاہرے میں معصوم بچے سب سے آگے پلے کارڈ اٹھا کر موجود تھے اور وہ ہی سب سے پہلے نشانے پر آئے پولیس کے لاٹھی چارج

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

23-01-2015 :تاریخ اشاعت