جمہوریہ وسطی افریقہ میں ہینڈ گرنیڈ کوکا کولا سے بھی سستاہے ،رپورٹ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
تاریخ اشاعت: 2015-01-20
پچھلی خبریں -

تلاش کیجئے

جمہوریہ وسطی افریقہ میں ہینڈ گرنیڈ کوکا کولا سے بھی سستاہے ،رپورٹ

بینگوئی (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔20جنوری۔2015ء )جمہوریہ وسطی افریقہ میں خانہ جنگی کے بارے میں تازہ تحقیقات سے پتہ چلا ہے کہ کس طرح سے ہتھیاروں کی عالمی صنعت نے وہاں باغی فورسز کو غیرقانونی طور پر ہتھیار فراہم کیے ہیں۔تحقیقات کے ایک نگراں کا کہنا ہے کہ وہاں گرنیڈ یا دستی بم کوکا کولا کی بوتل سے بھی سستے داموں دستیاب ہے۔یہ تحقیقات برطانیہ کے کنفلکٹ آرمامینٹ ریسرچ نامی ادارے نے کرائی ہیں جو یورپی یونین کے لیے کام کرتا ہے۔

تحقیقات کے ایک نگراں مائیک لوئس نے کہا کہ جمہوریہ وسطی افریقہ کے دارالحکومت بینگوئی میں گرنیڈ یا دستی بموں کی اتنی بہتات ہے کہ آپ انھیں کوکا کولا کے ایک کین سے بھی کم قیمت میں خرید سکتے ہیں۔’یہ چینی ساختہ ٹائپ 82-2 ہینڈ گرینڈ ہیں اور یہ بینگوئی میں کوکا کولا کے ایک کین سے بھی کم قیمت میں خریدے جاسکتے ہیں۔ ہم نے خانہ جنگی کے تمام فریقوں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

20-01-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان