عراق ،دولت اسلامیہ نے350 ایزیدی رہا کر دیئے ، رہا ہونے والے ایزیدی لوگوں کوکرکوک ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر جنوری

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
تاریخ اشاعت: 2015-01-19
پچھلی خبریں -

تلاش کیجئے

عراق ،دولت اسلامیہ نے350 ایزیدی رہا کر دیئے ، رہا ہونے والے ایزیدی لوگوں کوکرکوک پہنچا دیا گیا ‘رہا ہونے میں کچھ زخمی ، کچھ معذور اور کچھ ذہنی بیماریوں میں مبتلاء ہیں‘انسانی حقوق تنظیم

بغداد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔19جنوری۔2015ء)شدت پسند گروہ دولت اسلامیہ نے شمالی عراق میں 350 بوڑھیاور بیمار ایزیدی باشندوں کو رہا کر دیا ہے۔داعش نے پچھلے برس شمالی عراق میں وسیع علاقوں پر قبضہ کرنے کے دوران ہزاروں ایزیدی باشندوں کو ہلاک اور قید کر لیا تھا۔اسی سالہ ایک ایزیدی نے بر طا نو ی خبر رساں کو بتایا کہ جب انھیں بسوں میں سوار ہونے کا حکم دیا تو انھیں ڈر تھا کہ انھیں ہلاک کرنے کے لیے لے جایا جا رہا ہے لیکن ان کے خدشات کے برعکس شدت پسند نے انھیں ہویجا کی چیک پوسٹ پر لا کر انھیں رہا کر دیا۔

کرد فوجی پیشمرگا نے رہا ہونے والے ایزیدی لوگوں کو انھیں اپنی تحویل میں لے کے کرکوک پہنچا دیا ہے۔بعض کو فوراً ہسپتال لے جایاگیا ہے۔انسانی حقوق کے اداروں کے خیال میں دولت اسلامیہ کے عسکریت پسندوں نے ہزاروں ایزیدی لوگوں کو اغوا کر رکھا ہے۔ایمنسٹی انٹرنیشنل کا کہنا ہے کہ مغوی ایزیدی خواتین کو ہولناک جنسی تشدد‘ کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ابھی تک یہ واضح نہیں کہ دولت اسلامیہ کے شدت پسندوں نے ایزیدی لوگوں کو کیوں رہا کیا ہے۔انسانی حقوق کے ورکر خودر دوملی نے خبررساں ادارے کو بتایا کہ ’رہا ہونے میں کچھ زخمی ہیں، کچھ معذور اور کچھ ذہنی بیماریوں میں مبتلاء ہیں۔

19-01-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان