کینیڈا: امام مسجد کو اسلام قبول کرنے والوں سے پریشانی، معمول سے زیادہ تعداد میں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ جنوری

مزید بین الاقوامی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
تاریخ اشاعت: 2015-01-17
-

تلاش کیجئے

کینیڈا: امام مسجد کو اسلام قبول کرنے والوں سے پریشانی، معمول سے زیادہ تعداد میں غیر مسلموں کا قبول اسلام کرنا ہی ان کی وجہ پریشانی ہے‘امام مسجد

اوٹاوا(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔17جنوری۔2015ء )عام طور پر کسی مذہب کے نئے اختیار کرنے والوں کی آمد پر مذہبی رہنماوں کو خوشی ہوتی ہے لیکن کینیڈا کے شہر اوٹاوا کے سب سے بڑے امام مسجد کا معاملہ مختلف ہے۔ وہ نومسلموں کی تعداد بڑھنے پر پریشان ہیں۔اوٹاوا کی سب سے بڑی مسجد کے امام کی پریشانی کی وجہ یہ بتائی جا رہی ہے کہ معمول سے زیادہ تعداد میں غیر مسلموں کا قبول اسلام کرنا ہی ان کی وجہ پریشانی ہے۔

پریشان ہونے یا اس معاملے کو سمجھنے سے قاصر ہونے کی وجہ یہ بھی ہے۔ پچھلے سال بائیس اکتوبر کو کینیڈین پارلیمنٹ کے باہر ہونے والے پر تشدد واقعے کے بعد ان نو مسلموں کی تعداد میں غیر معمولی اضافہ ہو گیا ہے۔اس لیے یہ بات حیرت انگیز ہے کہ ایک پر تشدد واقعے کے بعد اسلام قبول کرنے والوں کی تعداد میں اس قدر اضافہ کیوں ہو گیا ہے۔امام مسجد کا کہنا ہے ''ہم نے ان نو مسلموں کو اپنے رابطہ نمبر دیتے ہیں اور رابطہ رکھنے کے ساتھ ساتھ مسجد میں آنے کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں لیکن ایک ہی بار کے بعد ان نو مسلموں کی بڑی تعداد عملاً غائب ہو جاتی ہے۔

''اوٹاوا کی سب سے بڑی مسجد کے امام سام میتوالے کے نزدیک پریشانی کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ اسلام بول کرنے کے لیے ماضی کے مقابلے میں بڑی تعداد میں رجوع کرنے والے افراد اسلامی تعلیمات سیکھنے کی غرض سے یا عبادت کے طریقے سیکھنے کے لیے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

17-01-2015 :تاریخ اشاعت