قومی اسمبلی، پیپلزپارٹی کے رکن قومی اسمبلی میر اعجاز حسین جاکھرانی کے امیگریشن ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید قومی خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
تاریخ اشاعت: 2015-01-14
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:05 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:06 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:09 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:16 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:11 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:13 اسلام آباد کی مزید خبریں

تلاش کیجئے

قومی اسمبلی، پیپلزپارٹی کے رکن قومی اسمبلی میر اعجاز حسین جاکھرانی کے امیگریشن ترمیمی بل 2014ء بل پر حکومت و اپوزیشن جماعتوں میں شدیدبحث، سپیکر نے بحث کے دوران معاملہ متعلقہ قائمہ کمیٹی کے سپرد کردیا، قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ و دیگر اراکین کا احتجاج، سینیٹ سے منظور شدہ بل قائمہ کمیٹی کو نہیں بھجوایا جاسکتا ، سید خورشید شاہ،معاملہ دوبارہ ایوان میں آئیگا، ڈپٹی سپیکر

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔14جنوری۔2015ء) قومی اسمبلی، پیپلزپارٹی کے رکن قومی اسمبلی میر اعجاز حسین جاکھرانی کے امیگریشن ترمیمی بل 2014ء بل پر حکومت و اپوزیشن جماعتوں میں شدیدبحث، سپیکر نے بحث کے دوران معاملہ متعلقہ قائمہ کمیٹی کے سپرد کردیا، قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ و دیگر اراکین کا احتجاج، خورشید شاہ نے کہاہے کہ سینیٹ سے منظور شدہ بل قائمہ کمیٹی کو نہیں بھجوایا جاسکتا جبکہ ڈپٹی سپیکر نے موقف اختیار کیا کہ معاملہ دوبارہ ایوان میں آئیگا۔

منگل کے روز نجی کارروائی کے یوم کے موقع پر پیپلزپارٹی کے رکن قومی اسمبلی میر اعجاز حسین جاکھرانی نے امیگریشن آرڈیننس 1979ء میں مزید ترمیم کرنے کا بل (امیگریشن ترمیمی بل 2014ء )جوکہ ایوان بالا سے منظور شدہ ہے پیش کرنے کی اجازت دی جائے جس پر انہیں بل پیش کرنے کی اجازت دی گئی جب پیپلزپارٹی کے رکن نے بل پیش کیا تو حکومت کی طرف سے اس بل پر وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ریاض حسین پیرزادہ نے اعتراض کرتے ہوئے کہاکہ اس بل میں متعلقہ وزارت کی سفارشات شامل نہیں ہیں اس لئے معاملے کو متعلقہ قائمہ کمیٹی کے سپرد کیا جائے جس پر قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے کہاکہ سینیٹ سے پاس ہونے کی صورت میں دوبارہ بل قائمہ کمیٹی نہیں بھجوایا جاسکتا اگر ایسا کیاگیا

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

14-01-2015 :تاریخ اشاعت